مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو سے کاروبار، سیاحت سمی دیگر شعبے تباہ 

مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو سے کاروبار، سیاحت سمی دیگر شعبے تباہ 

  

  سرینگر (این این آئی)بھارتی حکومت کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں مسلسل کرفیو کی وجہ سے کاروبار بند ہے، نجی شعبہ اور سیاحت تباہی کے دہانے پر پہنچ گیا۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق گزشتہ ایک سال سے سیاحت کا شعبہ با لکل ٹھپ ہے اور کورونا وائرس کی وبا کے باعث اس سال بھی اس کی بحالی کا کوئی امکان نہیں۔کشمیر ایوان صنعت وتجارت کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 5 اگست 2019 سے لے کر آج تک مجموعی نقصان 45ہزارکروڑ روپے سے زیادہ ہے اور کشمیر جیسے چھوٹے سے علاقے میں ساڑھے چار لاکھ سے زائد افراد بے روزگار ہوچکے ہیں۔ غیر قانونی طور پر بھارت کے زیر قبضہ جموں و کشمیرمیں مسلسل فوجی محاصرے کی وجہ سے ہزاروں خاندانوں کے پا س آمدنی کا کوئی ذریعہ نہیں ہے۔علاوہ ازیں ضلع کولگام کے علاقے سیگھن پور میں بھارتی فورسز کے محاصرے اورتلاشی سے علاقے میں خو ف وہراس پھیل گیا کئی جگہوں پر بھارتی فورسز کے خلاف مظاہرے کئے گئے۔

مقبوضہ کشمیر

مزید :

صفحہ آخر -