تعمیراتی کام کی بندش‘ قبائل کا ٹھیکیدار کیخلاف نوٹس لینے کا مطالبہ

تعمیراتی کام کی بندش‘ قبائل کا ٹھیکیدار کیخلاف نوٹس لینے کا مطالبہ

  

ٹانک(نمائندہ خصوصی)جنوبی وزیرستان بدر روڈ ٹھیکے کی حصول کیلئیٹھیکیداروں کے مابین جاری رسہ کشی اور سڑک پر تعمیراتی کام شروع نہ کرنے اور ٹھیکیدار کے سامنے متعلقہ حکام کی بے بسی پر نانو خیل محسود قبائل نے ٹھکیدار کے خلاف ازخود نوٹس لینے کا فیصلہ کرلیا، تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز بدر روڈ کے تعمیر میں حائل رکاوٹوں کے بارے میں نانوخیل قبائل کا گرینڈ جرگہ علاقہ بدر ویلی میں منعقد ہوا جس میں نانوخیل قبائل کے مشران اور نوجوانوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔جرگے کے مشترکہ فیصلے میں نانوخیل قبائل نے پندرہ افراد پر مشتمل ایک کمیٹی تشکیل دیکر روڈ تنازعے کو حل کرنیکیلئے تمام تر اختیارات دے دیئے، کمیٹی میں بدر نانوخیل قبائل کے تمام ذیلی اقوام کے آفراد شامل ہیں جس میں قوم گیگاخیل سے گل زادہ خان، نورحسین خان، نامبوت خان، قوم درامن خیل سے عبدالمجید، ڈاکٹر خان، زاوار خان، قوم نیکزان خیل سے شیروز خان، سید والی خان، قوم کیکاڑائی سے حاجی زاریم خان، گل شیدخان، پالک خان اور فقیر (بزان خیل) سے نورغنی خان، گل خانان، اولیا خان اور نانوخیل قبائل کا جرنل سیف اللہ خان (سائپل) شامل ہیں، مذکورہ کمیٹی ٹھیکیداروں سے رابطہ کرکے ان کے مابین اختلافات ختم کرکے روڈ پر جلد کام شروع کرنے کیلئے راہ ہموار کریگی، گرینڈ جرگے میں یہ فیصلہ طے پایا کہ جو ٹھیکیدار جرگے اور کمیٹی کے سامنے قصور وار ٹھرا اور جرگے کا فیصلہ تسلیم نہیں کیا تو اس کے خلاف قوم نانو خیل ازخود نوٹس لیکر کاروائی کریگی، جرگے یہ فیصلہ بھی ہوا کہ کسی کو علاقے میں ترقیاتی کاموں میں روڑے آٹھانے کی اجازت نہیں دی جائیگی اور ترقی دشمن عناصر کے خلاف اہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -