شمسی ٹیوب ویلز کی پانی کی فراہمی کے عوض کاشتکاروں سے رقم کی وصولی کیخلاف مظاہرہ

  شمسی ٹیوب ویلز کی پانی کی فراہمی کے عوض کاشتکاروں سے رقم کی وصولی کیخلاف ...

  

پشاور (سٹی رپورٹر)پشاور کے علاقے متنی ادیزئی کے عوام نے شمسی ٹیوب ویلز کی پانی کی فراہمی کے عوض کاشت کاروں سے رقم کی وصولی کیخلاف گزشتہ روز کوہاٹ روڈ پر احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین کی قیادت علاقے کے سماجی کارکن شوکت خان ادیزئی کر رہے تھے اور مظاہرین نے کہا کہ متنی، ادیزئی، یوسف خیل، اضاخیل، شریکیرہ، مریم زئی، پاسنی، بڈھ بیر، ماشوخیل اور دیگر ملحقہ علاقوں میں محکمہ پبلک ہیلتھ نے نہروں کا پانی نہ ہونے کے پیش نظر شمسی توانائی پر چلنے والے ٹیوب ویلز لگائے ہیں جس میں مالکان کو پابند بنایا گیا ہے کہ وہ بغیر کسی معاوضے اور بلا تعطل کھیتوں کی آب پاشی کے لئے پانی کی فراہمی یقینی بنائیں گے تاکہ کاشت کاروں کی مشکلات کم ہو لیکن اب مالکان ان ٹیوب ویلز کو ذاتی جاگیر سمجھ کر پانی دینے کے بدلے کاشت کاروں سے فی گھنٹہ ڈھائی سو سے دو سو روپے کی رقم وصول کر رہے ہیں جبکہ رقم نہ دینے کی صورت میں پانی بھی نہیں دے رہے جس سے یہ علاقے ایک بار پھر بنجر ہوتے جا رہے ہیں انہوں نے محکمہ پبلک ہیلتھ اور صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کاشت کاروں سے پیسوں کی وصولی کے بدلے پانی کی فراہمی پر سخت نوٹس لے اور مالکان کے خلاف کارروائی کی جائے ورنہ وہ سخت احتجاج کرینگے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -