جعلی ڈگری، جمشید دستی کیخلاف کیس کی سماعت آج تک ملتوی کرنیکا حکم

جعلی ڈگری، جمشید دستی کیخلاف کیس کی سماعت آج تک ملتوی کرنیکا حکم

  

 ملتان (خصو صی رپورٹر)ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ملتان نے عوامی راج پارٹی کے سربراہ و سابق ممبر قومی اسمبلی جمشید احمد دستی (بقیہ نمبر44صفحہ7پر)

کے خلاف جعلی ڈگری پر الیکشن میں حصہ لینے سے متعلق کیس کی سماعت شہادتیں قلمبند کرنے لیے 10 اگست تک ملتوی کرنے کا حکم دیا ہے۔ اس موقع پر بتایا گیا کہ جمشید دستی کے بھائی مشتاق پہلوان کا قتل ہوگیا ہے اس لیے جمشید دستی عدالت پیش نہیں ہوسکتے۔ قبل ازیں فاضل عدالت میں الیکشن کمیشن کے دائر کردہ استغاثہ کے مطابق جمشید احمد دستی نے 2008 میں مدرسے کی بی اے کی ڈگری پر الیکشن میں حصہ لیا تھا۔جس سند کا ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے پاس ریکارڈ موجود نہیں ہے۔ ملزم نے آرٹیکل 62 اور 63 کی خلاف ورزی کی ہے جسے حقیقت چھپانے پر نااہل کیا جانا چاہیے۔ملزم نے مظفرگڑھ کے حلقہ این اے 178 سے الیکشن میں حصہ لیا جس میں مدرسوں کی ڈگری کاغذات نامزدگی کے ساتھ لف کی تھیں۔ لیکن ان ڈگریوں کا ریکارڈ موجود نہیں ہے اس بارے سپریم کورٹ بھی واضح احکامات کے ساتھ فیصلہ دے چکی ہے۔ 

حکم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -