سابق امریکی صدر بش کی بیٹی کی جانب سے وائٹ ہاوس میں شرمناک حرکات کا اعتراف

سابق امریکی صدر بش کی بیٹی کی جانب سے وائٹ ہاوس میں شرمناک حرکات کا اعتراف
سابق امریکی صدر بش کی بیٹی کی جانب سے وائٹ ہاوس میں شرمناک حرکات کا اعتراف

  

نیو یارک ( نیوز ڈیسک ) سابق امریکی صدر جارج ڈبلیو بش کی بیٹی جینا بش کا حالیہ انکشاف اس وقت امریکی میڈیا کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے۔حال ہی میں انہوں نے ایک ٹی وی پروگرام میں بطور مہمان شرکت کی ۔پروگرام کے دوران ایک کالر نے ان سے سوال پوچھ ڈالا کہ کیا وائٹ ہاﺅس میں قیام کے دوران ان کے کسی سے تعلقات رہے ؟

دنیا کے سب سے بڑے سانپوں کے بارے میں جانئے

اس پر جینا بش کا کہنا تھا کہ وہ 19 برس کی تھیں جب جارج بش صدر بنے ۔اس وقت وہ ان کے مستقبل کے شوہر ’ہنری ہیگر‘ ان کے بوائے فرینڈ تھے۔لہذا وہ اکثر ان سے ملنے وائٹ ہاﺅس آیا کرتے تھے اور دونوں کے درمیان بوس و کنار اور ہلکی پھلکی چھیڑ چھاڑ چلتی رہتی تھی۔ ان کے مطابق ان کاموں کے لیے ’امریکی ایوان صدر ‘ کی چھت اکثر ان کے کام آتی تھی۔اس جواب پر شو کے میزبان حیرت میں مبتلا نظر آئے اور اس وقت امریکی میڈیا کی صورتحال بھی کچھ ایسی ہی نظر آتی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس