اٹھارہ ہزاری ،مسلح افراد کا گھر پر دھاوا ،میاں بیوی اور 4بچوں کو ذبح کر ڈالا

اٹھارہ ہزاری ،مسلح افراد کا گھر پر دھاوا ،میاں بیوی اور 4بچوں کو ذبح کر ڈالا ...

                                     جھنگ (نمائندہ خصوصی):پولیس تھانہ اٹھارہ ہزاری کے علاقہ بستی ملکانہ تحصیل اٹھارہ ہزاری ضلع جھنگ میںپیر اور منگل کی درمیانی شب خونریز واردات کے دوران میاں بیوی اور ان کے 4بچوں کو بےدردی سے ذبح کر دیاگیا ، قتل ہونے والوں میں 3بچیاں ، ایک بچہ بھی شامل ہیں نیز ایک 13سالہ بچی شدید زخمی ہوئی ہے۔تین معصوم لڑکے معجزانہ طور پر محفوظ رہے۔ پولیس ذرائع نے بتایاکہ صوابی کے رہائشی فضل رزاق نے تقریباً 15 سال قبل اپنی اہلیہ فاطمہ کے ہمراہ بستی ملکانہ تحصیل اٹھارہ ہزاری ضلع جھنگ میں آکر سکونت اختیار کر لی تھی اور محنت مزدوری کرکے اپنی گزر اوقات کرتاتھا۔ 55سالہ فضل رزاق ، اس کی 48سالہ بیوی فاطمہ،17سالہ بیٹی رابعہ بصری ، 15سالہ بیٹی یاسمین ، 13سالہ بیٹی عائشہ ، 11سالہ بیٹا عثمان ، 7سالہ بیٹی کائنات ، 8سالہ بیٹا حسنین ، 2سالہ بیٹا اسماعیل اور 15روزہ بیٹا ابراہیم پیر کی رات حسب معمول اپنے گھر میں سوئے ہوئے تھے کہ پیر اور منگل کی نصف شب کے قریب نامعلوم افراد کلہاڑیوں اور چھریوںسے لیس ہو کر ان کے گھرمیں داخل ہو گئے اور فضل رزاق ، اس کی بیوی فاطمہ ، تین بیٹیوں رابعہ ، یاسمین ، کائنات اور بیٹے عثمان سمیت 6افراد کو موت کے گھاٹ اتاردیا ۔ پولیس ذرائع نے بتایا کہ زخمی بچی عائشہ ملزمان کی شناخت کے بارے میں کچھ بتانے سے قاصر ہے۔

مزید : صفحہ اول