صوبائی دارالحکومت، فیکٹری سمیت مختلف مقامات پر آتشزدگی ، کروڑوں کا سامان جل کر خاکستر

صوبائی دارالحکومت، فیکٹری سمیت مختلف مقامات پر آتشزدگی ، کروڑوں کا سامان جل ...

لاہور(کرا ئم سیل )صوبائی دارالحکومت میں آگ لگنے کے مختلف واقعات میں کروڑوں روپے مالیت کا سامان جل کر راکھ ہوگیا، اطلاع ملنے پر ریسکیو1122اور فائر بریگیڈ کے عملہ نے موقعوں پر پہنچ کر آگ پر قابو پالیا۔بتایا گیا ہے کہ مانگا کے علاقہ رائے ونڈ روڈ پرعامر فیاض شیخ نے کوہ نور ٹیکسٹائل ملزکے ایک سیکشن جس میں اچانک آگ بھڑک اٹھی جس نے دیکھتے ہی دیکھتے پوری فیکٹری کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔جس وقت آگ لگی اس وقت فیکٹری میں 500سے زائد ملازمین کام کررہے تھے جن کوہنگامی سائرن بجا کر فورافیکٹری سے باہر نکالا گیا، فائر بریگیڈ اور ریسکیو1122کے عملہ کے پہنچنے سے پہلے کروڑوں روپے کا کپڑا، ویسٹ اور مشینری جل کر راکھ ہوگئی ، فیکٹری میں آگ بار بارسلگتی رہی جس پر امدادی ٹیموں نے بعد میں قابو پالیا۔ فیکٹری مالکان کے مطابق آگ اچانک بوائلر سیکشن میں بھڑکی۔ ابتدائی طور پر شبہ کیا جارہا ہے کہ آگ شارٹ سرکٹ سے لگی اور فیکٹری میں آگ لگنے سے تقریبا ڈیڑھ کروڑ سے زائد کا نقصان ہوا ہے۔ آگ لگنے کا دوسرا واقعہ ایجرٹن روڈ پر واقع شاہین کمپلیکس کے پانچویں فلور پر نجی ٹرانسپورٹ کے دفترمیں پیش آیا جہا ں پراسرار طور پر آگ بھڑک اٹھی جس سے وہاں پڑا سارا ریکارڈ اور فرنیچر جل گیا۔ ریسکیو اور فائربریگیڈ کی ٹیموں نے آگ پر قابو پالیاجبکہ آر اے بازار کے علاقہ مریم کالونی میں واقع ایک گھر میں شارٹ سرکٹ کے باعث اچانک آگ بھڑک اٹھی جس کے باعث گھر میں پڑا لاکھوں روپے مالیت کا فرنیچر و دیگر سامان خاکستر ہوگیا، امداد ی ٹیموں نے اطلاع ملنے پر موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پالیا۔

مزید : علاقائی