گم ہوجانے والا ملائیشین طیارہ تباہ کیسے ہوا؟ بالآخر تہلکہ خیز حقیقت سامنے آگئی، ہوائی جہاز پر سفر کرنیوالوں کو پریشان کردیا

گم ہوجانے والا ملائیشین طیارہ تباہ کیسے ہوا؟ بالآخر تہلکہ خیز حقیقت سامنے ...
گم ہوجانے والا ملائیشین طیارہ تباہ کیسے ہوا؟ بالآخر تہلکہ خیز حقیقت سامنے آگئی، ہوائی جہاز پر سفر کرنیوالوں کو پریشان کردیا

  

سڈنی (نیوز ڈیسک) گزشتہ سال 8مارچ کو لاپتہ ہونے والی ملائیشین ائیرلائنز کی پرواز MH370 کی تلاش ڈیڑھ سال سے زائد عرصہ گزرنے کے باوجود جاری ہے۔ اس بدقسمت طیارے کی تباہی کے متعلق اب آسٹریلوی تحقیق کاروں کی طرف سے ایک نئی رپورٹ سامنے آگئی ہے جس کے مطابق طیارے میں بجلی کا نظام اچانک معطل ہوگیا جس کے بعد یہ آٹو پائلٹ نظام کے تحت اڑتا چلا گیا، حتیٰ کہ اس کا ایندھن ختم ہوگیا اور یہ بحیرہ جنوبی ہند میں گر کر تباہ ہوگیا۔

جریدے ڈیلی میل کے مطابق آسٹریلین ٹرانسپورٹ بیورو کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ طیارے میں بجلی کا نظام معطل ہوجانے کی وجہ سے ہی اس کے دو اہم ترین کمیونیکیشن سسٹمز نے کام کرنا بند کردیااور ائیرٹریفک کنٹرول کی طرف سے پائلٹ کے ساتھ رابطے کی کوشش مسلسل ناکام ہوتی رہی۔

مزید جانئے: دنیا کی 10 بلند ترین عمارتیں، کن ممالک اور شہروں میں ہیں؟ انتہائی دلچسپ معلومات

تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ پرواز کی کوالا لمپور ائیرپورٹ سے روانگی کے تقریباً ڈیڑھ گھنٹے بعد طیارے کے سیٹلائٹ ڈیٹا یونٹ نے غیر متوقع طور پر ایک سیٹلائٹ کے ساتھ رابطے کی کوشش کی۔ اب معلوم ہوا ہے کہ دراصل طیارے کا برقی نظام فیل ہونے پر اس کے سیٹلائٹ ڈیٹا یونٹ نے قریب ترین کسی بھی سیٹلائٹ کے ساتھ رابطے کی کوشش کی تھی۔

اس رپورٹ کے بعد یہ نظریہ پس منظر میں چلا گیا ہے کہ طیارے کے پائلٹوں کی طرف سے طیارے کے سسٹمز کو بند کرکے کوئی تخریبی کارروائی کی گئی۔ تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ غالباً برقی نظام کی ناکامی طیارے میں لگنے والی آگ کے باعث ہوئی اور اس طیارے کی تباہی کو کسی تخریبی کارروائی کا نتیجہ قرار نہیں دیا جاسکتا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس