رشوت ستانی کے معاشرے پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں،وزیراعلیٰ

رشوت ستانی کے معاشرے پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں،وزیراعلیٰ

لاہور(نمائندہ خصوصی) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ کرپشن ترقی کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے ۔ بدعنوانی کے نقصانات معاشرے کو اس وقت تباہ کر دیتے ہیں جب سماجی شعبوں کی بہتری کیلئے مختص فنڈز بددیانتی کی نذر ہو جائیں۔ رشوت ستانی کی لعنت کے معاشرے پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ بدعنوانی کے مکمل خاتمے کیلئے معاشرے کے تمام طبقات کوحکومت کے ساتھ مل جل کر جدوجہد کرنا ہوگی تاکہ اس ناسور کا موثر انداز میں سدباب کیا جا سکے۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے انسداد بدعنوانی کے عالمی دن کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا کہ حکومت پنجاب نے سرکاری سطح پر شفافیت ومیرٹ کے فروغ اور بدعنوانی کے خاتمے کیلئے موثر اقدامات اٹھائے ہیں۔موجودہ حکومت کو یہ کریڈٹ جاتا ہے کہ کرپشن کا ایک بھی سکینڈل اس کے دامن پر نہیں۔ معاشرے سے کرپشن کا خاتمہ اورحکومتی کارکردگی کی ہر سطح پر شفافیت کو یقینی بنانا پاکستان مسلم لیگ(ن) کی اولین ترجیحات میں شامل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بین الاقوامی منظر نامے میں کرپشن میں کمی کے حوالے سے پاکستان کامقام بہترہوا ہے تاہم قانون پر عملدرآمد کرتے ہوئے سماجی پابندیوں کے ذریعے کرپٹ عناصر کا کڑا محاسبہ کرنے کی ضرورت ہے۔ آج کے دن ہم سب نے مل کر کرپشن کے خاتمے کا عزم کرنا ہے۔ انہوں نے کہاکہ اقوام متحدہ کی قرارداد کے مطابق دنیا بھر میں منایا جانے والا’’انٹرنیشنل اینٹی کرپشن ڈے‘‘ جہاں عوام میں کرپشن کیخلاف شعور بیدار کرنے کا باعث بنتا ہے وہاں حکومتوں اورانسداد بدعنوانی کے اداروں کو بھی اس معاشرتی فرض سے نبردآزما ہونے کے عزم کی تجدید کا موقع بھی فراہم کرتا ہے ۔

مزید : صفحہ اول