زیادہ پیسے کمانے پر متحدہ عرب امارات میں مقیم شہری کو دبئی کی جیل میں ڈال دیا گیا

زیادہ پیسے کمانے پر متحدہ عرب امارات میں مقیم شہری کو دبئی کی جیل میں ڈال دیا ...
زیادہ پیسے کمانے پر متحدہ عرب امارات میں مقیم شہری کو دبئی کی جیل میں ڈال دیا گیا

  

دبئی سٹی (مانیٹرنگ ڈیسک) کوئی اپنے وطن اور عزیز و اقارب کو چھوڑ کر بیرون ملک جاتا ہے تو صرف اس لئے کہ زیادہ پیسہ کما سکے، البتہ ملائیشیا سے تعلق رکھنے والے ایک بزنس مین کی پیسہ کمانے کی کوشش اسے بہت مہنگی پڑ گئی ہے، بیچارہ آٹھ ماہ سے جیل میں بند ہے۔ رچرڈ لاﺅ نامی اس ملائشین شہری پر اس کے اماراتی کاروباری شراکت دار نے الزام لگایا تھا کہ اس نے بہت زیادہ مال کما لیا ہے، جس پر ملائیشین بزنس مین کو جیل میں ڈال دیا گیا ہے۔

سعودی عرب:بلیوں کو سڑک پرگھسیٹنے کے جرم میں شہری کو 50ہزارریال جرمانے کی تجویز

مالے میل آن لائن کے مطابق رچرڈ لاﺅ پر اس کے اماراتی کاروباری شراکت دار نے ملازمین کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی اور کمیشن میں خرد برد کے ذریعے مال بنانے کا الزام لگایا تھا۔ رچرڈ لاﺅ کو اپریل میں گرفتار کیا گیا لیکن شواہد دستیاب نہ ہونے کے باوجود ہر ماہ اس کی حراست میں توسیع کردی جاتی ہے۔ اس کے والد نے اپنی پریشانی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ”گزشتہ کچھ مہینے ہمارے لئے ایک ڈراﺅنے خواب کی طرح گزرے ہیں۔ ہم ہر وقت خدشات میں گھرے رہتے ہیں اور اپنے بیٹے کی سلامتی اور مستقبل کے حوالے سے بے حد پریشان ہیں۔ میں یہ بات سمجھنے سے قاصر ہوں کہ شواہد کے بغیر محض ایک اماراتی شہری کی شکایت پر میرے بیٹے کو کیسے گرفتار کرلیا گیا اور آٹھ ماہ سے ثبوت نہ ملنے کے باوجود وہ کیسے ابھی تک حراست میں ہے۔“ رپورٹ کے مطابق اماراتی شہری ولید جمعہ ابو شباس نے ملائیشین شہری کے علاوہ آٹھ دیگر افراد پر بھی الزامات عائد کئے تھے کہ انہوں نے میرین ٹرانسپورٹ کمپنی شن یانگ کی تنخواہوں اور کمیشن کی رقوم میں خورد برد کرکے مال بنایا تھا۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

مزید :

عرب دنیا -