نواز شریف کو جیل میں اذیت دی جاتی رہی :حسین نواز

نواز شریف کو جیل میں اذیت دی جاتی رہی :حسین نواز
نواز شریف کو جیل میں اذیت دی جاتی رہی :حسین نواز

  



لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن ) سابق وزیراعظم نواز شریف کے بیٹے حسین نواز نے کہا ہے کہ نواز شریف کو قید تنہائی میں رکھا گیا اور جیل میں اذیت دی جاتی رہی، باپ کے سامنے بیٹی کو گرفتار کیا گیا، والدہ کی وفات کا والد پر گہرا اثر ہے۔انہوں نے کہا کہ میاں نواز شریف کو کوٹ لکھپت سے نیب آفس کیوں لایا گیا؟ نیب کی حراست سے قبل پلیٹیلیٹس 75 ہزار تھے لیکن دوسرے روز ان کے پلیٹیلیٹس 16 ہزار رہ گئے تھے، ڈاکٹر ان کو کچھ دیے جانے کی تحقیق کررہے ہیں اور چند دن میں والد کی میڈیکل رپورٹ آجائے گی تو حقیقت سامنے آجائے گی۔میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ کسی پر کوئی الزام نہیں لگا رہا، رپورٹ آنے پر ہر بات واضح ہو جائے گی، اِن رپورٹس کو عدالت میں جمع کرائیں گے۔حسین نواز نے بتایا کہ پلیٹیلیٹس متوازن ہونے کے بعد ہی والد کو لاحق امراض کا علاج شروع ہوسکے گا۔

مزید : قومی