وہوا میں بس حادثہ‘المناک واقعہ کو ایک سال مکمل ’7افراد کی آج پہلی برسی‘ اہل خانہ غم سے نڈھال 

وہوا میں بس حادثہ‘المناک واقعہ کو ایک سال مکمل ’7افراد کی آج پہلی برسی‘ اہل ...

  



وہوا(نمائندہ پاکستان) چشمہ رائٹ بنک کینال میں بس جاگرنے کے المناک واقعہ کو آج ایک سال بیت گیا، جاں بحق ہونے والے (بقیہ نمبر28صفحہ12پر)

سات افراد کی برسی آج منائی جائے گی، تفصیل کے مطابق گذشتہ سال 10 دسمبر 2018؁ء کو وہوا سے ملتان جانے والی مسافر بس نمبر BYU 355 جسے ڈرائیور محمد وسیم چلارہاتھااور اس میں 22 مسافر سوار تھے جب وہوا سے پندرہ کلومیٹر کے فاصلہ پر چشمہ رائیٹ بنک کینال کے ہیڈصوبہ کے مقام پر پہنچی تو اچانک بس ڈرائیور کے کنٹرول سے باہر ہوگئی اور نہر میں جاگری تھی اور مکمل طور پر ڈوب گئی تھی جس کے نتیجہ میں سات مسافر جن میں سردار ذوالقرنین خان کھتران ولد سردار الطاف اقبال خان کھتران سکنہ وہوا، ہمایوں رشید ولد رشید احمد قیصرانی سکنہ وہوا، ہدایت اللہ ولد خالقداد سنیاسی کھتران سکنہ وہوا، سمیع اللہ ولد غلام قاسم سکنہ جلووالی، غلام یٰسین ولد اللہ بخش سکنہ بنڈہ، بس کنڈکٹر صداقت علی ولد علی محمد سکنہ چوبارہ  اور محمدرضوان ولد محمد رمضان جاں بحق ہوگئے تھے آج بروز منگل اس سانحہ کو پورا ایک سال مکمل ہوگیا ہے حادثہ میں جاں بحق ہونے والے مسافروں کے لواحقین آج بھی سانحہ میں راہ عدم سدھار جانے اپنے پیاروں کے غم میں نڈھال ہیں مرحومین کی روح کو ایصال ثواب کے لیے آج قرآن خوانی کا اہتمام بھی کیا جائے گا۔

برسی 

مزید : ملتان صفحہ آخر