پولیس کوشادی ہالوں کے مالکان کوغیر قانونی طور پر ہراساں نہ کرنیکا حکم

پولیس کوشادی ہالوں کے مالکان کوغیر قانونی طور پر ہراساں نہ کرنیکا حکم

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے پولیس کوشادی ہالوں کے مالکان کوغیر قانونی طور پر ہراساں کرنے سے روک دیا۔مسٹر جسٹس جواد حسن نے شادی ہالوں کی جلد بندش اورمالکان کو ہراساں کرنے کے خلاف دائر مختلف درخواستوں پر پنجاب حکومت کو 28جنوری کے لئے نوٹس بھی جاری کردیئے ہیں۔درخواست گزاروں کا موقف ہے کہ حکومت نے شادی ہالوں کو دس بجے بند کرنے کی پابندی عائد کررکھی ہے،معمولی تاخیر پر مقدمہ درج کر کے مالکان کو ہراساں کیا جاتا ہے،خیبرپختونخوا میں شادی ہال گیارہ بجے تک کھلے رکھنے کی اجازت ہے،پنجاب میں شادی ہال دس بجے بند کرنے کا حکم امتیازی سلوک ہے،استدعا ہے کہ عدالت حکومت کو شادی ہال کا وقت بڑھانے اور پولیس کو ہراساں کرنے سے روکے، اس کیس کی مزید سماعت 28جنوری کو ہوگی۔

شادی ہال

مزید : صفحہ آخر