طلبہ ترقی کیلئے انفارمیشن ٹیکنالوجی پر توجہ دیں،مخدوم ہاشم

        طلبہ ترقی کیلئے انفارمیشن ٹیکنالوجی پر توجہ دیں،مخدوم ہاشم

  



لاہور(لیڈی رپورٹر) وزیر خزانہ پنجاب مخدوم ہاشم جواں بخت نے کہا ہے کہ طلبہ کی جدید دور کے علمی تقاضوں سے ہم آہنگنی اور ترقی کی دوڈ میں شمولیت کے لیے کمپیوٹرکی تعلیم انفارمیشن ٹیکنالوجی پر دسترس ناگزیر ہے۔ خاص کر اس وقت جب پوری دنیا ڈیجیٹل لائزیشن کے دور میں داخل ہو چکی ہے اور موجودہ حکومت ڈیجیٹل پاکستان کے تصور کو تعبیر دینے جا رہی ہے ہمیں دنیا کا مقابلہ کرنے کے لئے ہمیں آئی ٹی اور انجینئرنگ پر عبور حاصل کرنا ہو گا اورتحقیق و تخلیق کے شعبہ جات پر خصوصی توجہ دینا ہو گی۔ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر نے خواجہ فرید یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی رحیم یار خان میں کمپیوٹر سائنسز اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے نئے بلاک کی افتتاحی تقریب سے قبل اجلاس کی صدارت کے دوران کیا۔اجلاس میں ڈپٹی کمشنر علی شہزاد، وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر سلیمان طاہر، فیکلٹی ممبران ویگر موجود تھے۔صوبائی وزیر خزانہ نے کہا کہ حکومت پنجاب شعبہ تعلیم پر خصوصی توجہ دے رہی ہے تمام اضلاع میں یونیورسٹیوں کا قیام اور اور دیگر تعلیمی سہولیات مہیا کی جا رہی ہیں ہیں۔خواجہ فرید یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کی استعداد کار میں بھی مزید اضافہ کیا جائے گا۔یونیورسٹی کے فیز ٹو کی منظوری کے آخر ی مراحل میں ہے جلد فنڈز جاری کر دیئے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ یونیورسٹی کی باگ دو ڑ قابل ہاتھوں میں ہے اور محنتی فیکلٹی سٹاف محدود وسائل میں بہتر نتائج دے رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ خواجہ فرید یونیورسٹی کو دنیا کی بہترین درسگاہ بنانے کے لئے تمام وسائل فراہم کئے جائیں گے۔ خطہ میں تکنیکی ماہرین وقت کی اہم ضرور ت ہیں۔ہمارے ضلع میں دو بڑے فرٹیلائزر یونٹ، شوگر ملز، یونی لیور، کوکا کولا سمیت چھوٹی بڑی صنعتیں ہیں جبکہ انڈسٹریل اسٹیٹ میں جلد فنکنشل ہو جائے گی جس کا براہ راست فائدہ یونیورسٹی کے فارغ التحصیل طلبا کو ہو گا۔ کوشش ہے کہ رحیم یار خان سمیت پورے پنجاب میں طلبہ کو اپنے اضلاع میں اعلیٰ تعلیم اور ملازمت کے مواقع میسر ہوں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...