سندھ کابینہ نے سٹوڈنٹ یونی کی بحالی کا بل منظور کر لیا، اسلحہ رکھنا خلا ف قانون ہو گا: ترجمان سندھ حکومت 

  سندھ کابینہ نے سٹوڈنٹ یونی کی بحالی کا بل منظور کر لیا، اسلحہ رکھنا خلا ف ...

  



کراچی(سٹاف رپورٹر) سندھ کابینہ نے تعلیمی اداروں میں سٹوڈنٹ یونین کی بحالی بل منظور کرلیا۔وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ کے ترجمان کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ صوبائی کابینہ نے سٹوڈنٹ یونین کو بحال کرنے کا بل منظور کرلیا ہے، جو اسمبلی میں پیش کرکے اسے قائمہ کمیٹی برائے قانون کو بھیجا جائے گا، جہاں سے منظوری کے بعد اسے اسمبلی میں حتمی منظوری کے لئے پش کیا جائے گا۔مجوزہ قانونی بل کے مطابق سٹوڈنٹ یونین 7 سے 11 ممبران پر مشتمل ہوگی اور یہ یونین طلبہ منتخب کریں گے۔ یونین کا کام تعلیمی ماحول بہتر کرنا، نظم و ضبط پیدا کرنا اور غیر نصابی سر گرمیوں کا فروغ ہوگا، سٹوڈنٹ یونین کے لیے اسلحہ رکھنا، اس کے استعمال یا تعلیمی اداروں میں لانا خلاف قانون ہوگا، اس کے علاوہ تعلیمی سرگرمیوں کو روکنا،سٹوڈنٹس یا سٹوڈنٹ گروپس میں نفرت پھیلانا بھی خلاف قانون ہوگا۔

سٹوڈنٹ یونین بحالی

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)حکومت اور متحدہ اپوزیشن میں چیف الیکشن کمشنر اور دیگر ارکان کے معاملے پر ڈیڈلاک تھا جو اب ختم ہوتا نظر آرہا ہے۔ذرائع کے مطابق چیف الیکشن کمشنر کیلئے 2 نام شارٹ لسٹ کیے گئے ہیں جن میں حکومت کی جانب سے فضل عباس میکن جبکہ اپوزیشن نے اخلاق تارڑ کا نام دیا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس بدھ کو ہوگا جس میں دونوں ناموں پر غور کیا جائے گا اور امکان ہے کہ اِسی اجلاس میں ایک نام پر اتفاق ہوجائے۔

چیف الیکشن کمشنر تقرر

مزید : صفحہ اول


loading...