”جب ایم پی اے اور ایم این اے گھنٹہ گھر بن جائیں تو۔۔۔“چیئر مین پی اے سی نے نظام سے متعلق حقائق بیان کردیے

”جب ایم پی اے اور ایم این اے گھنٹہ گھر بن جائیں تو۔۔۔“چیئر مین پی اے سی نے ...
”جب ایم پی اے اور ایم این اے گھنٹہ گھر بن جائیں تو۔۔۔“چیئر مین پی اے سی نے نظام سے متعلق حقائق بیان کردیے

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئر مین پی اے سی رانا تنویرنے کہاہے کہ میرے خیال میں نظام ایسا ہونا چاہئے کہ جس میں ایم این اے اور ایم پی اے کی سفارش کی ضرورت نہ پڑے لیکن جب ایم پی اے اور ایم این اے گھنٹہ گھر بن جائے تو پھر کیا ہوگا؟

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے رانا تنویر نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت آئی تو اپوزیشن نے کہاکہ حکومت سے تعاون کریں گے۔اس وقت حکمران طبقے نے بڑی خوبصورتی سے یہ بیانیہ بنایاہے کہ اپوزیشن کے پاس کوئی ایشو نہیں ہے اور میڈیا نے بھی اس میں ایک اہم کردار ادا کیاہے ۔ انہوں نے کہا کہ قومی اسمبلی میں ہر ایشو پر بات ہوتی ہے لیکن عمران خان نے بیسیوں ایسے ایشوز پر باتیں کی ہے جو روز ٹی وی پر دکھائی جاتی رہی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ میرے خیال میں نظام ایسا ہونا چاہئے کہ جس میں ایم این اے اور ایم پی اے کی سفارش کی ضرورت نہ پڑے لیکن جب ایم پی اے اور ایم این اے گھنٹہ گھر بن جائے تو پھر کیا ہوگا ؟نظام ایسا بن جائے کے لوگوں کومارا مارا نہ پھر نا پڑے اور ان کے مسائل حل ہوجائیں۔ انہوں نے کہا کہ یہاں تو افسران سے یہ بھی کہنا پڑتاہے کہ یہ بیچارا سائل مارا مارا پھر رہاہے اس کی بات تو سن لیں ۔

مزید : قومی