ایم سی بی کے بورڈ آفڈائریکٹر کا اجلاس،مالیاتی گوشواروں کی منظوری دی گئی

ایم سی بی کے بورڈ آفڈائریکٹر کا اجلاس،مالیاتی گوشواروں کی منظوری دی گئی

  

لاہور (پ،ر) میاں محمد منشاء کی زیر صدارت ایم سی بی بینک لمیٹڈ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے اجلاس میں 31دسمبر،2015ء کو ختم ہونے والے سال کے دوران بینک کی کار کردگی پر نظر ثانی اور مالیاتی گوشواروں کی منظوری دی گئی بینک نے اپنے کم لاگت ڈپازٹ کی بنیاد،بہتر ایڈوانس اور نان مارک اپ آمدن سے مفید فراہمی کی بدولت اپنی مستحکم کارکردگی کو برقرار رکھا ایم سی بی بینک نے منافع قبل از ٹیکس42.333ارب روپے اور منافع بعداز ٹیکس25.551ارب روپے جو 2014ء کے مقابلے میں بالترتیب 15%اور5%کا اضافہ بیان کیا۔اس میں بنیادی فراہمی نیٹ مارک اپ آمدن میں 13% اضافے اور نان مارک اپ آمدن میں 32%اضافے کی ہے۔بینک کی نیٹ مارک اپ آمدن 49.322ارب روپے جبکہ نان مارک اپ آمدن بڑھ کر 17.115ارب روپے ہوگئی ہے۔نان مارک اپ آمدن میں اضافے کی وجہ حاصلاتِ سرمایہ(کپیٹل گین)ہے جو بڑھ کر2.780ارب روپے اور فیس اور کمیشن آمدن کی مد میں پچھلے سال کے مقابلے میں 1.158ارب روپے کا اضافہ دیکھا گیا ہے۔گراس مارک اپ آمدن کے سلسلے میں بینک نے انویسٹمنٹ آمدن کی بنیادی فراہمی سے 3.263ارب روپے اضافہ ریکارڈ کیا۔سرمایہ کاری آمدن میں اضافہ دانشمند انہ تعین اور بروقت سرمایہ کاری کے ارتکاز سے حاصل کیا گیا ہے۔سودی(interest)اخراجات کے سلسلے میں،بینک نے پچھلے سال کے مقا بلے میں 2.546ارب روپے کی کمی کی ہے جو کہ کم ہوتے ہوئے شرح کے ماحول کے لئے مناسب ہے۔دوران سال بینک نے اپنی لاگتی کمی میں اضافہ کے لئے اپنے زیادہ لاگت کے ڈپازٹس کو حکمت عملی سے بہت کم کر دیا ہے۔ایم سی بی بینک کے کل اثاثوں کی بنیاد 1.017کھرب روپے ہے جس میں دسمبر 2014کے مقابلے میں 9فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا ہے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -