پاکستان کو قومی زبان پر مشتمل یکساں نظام تعلیم کی اشد ضرورت ہے ،غلام عباس

پاکستان کو قومی زبان پر مشتمل یکساں نظام تعلیم کی اشد ضرورت ہے ،غلام عباس

  

لاہور( جنرل رپورٹر) تعلیمی اداروں میں اسلامی تحریک طلبہ کا کردار ہمیشہ مثبت اور تعمیری رہا ،طلبہ حقوق کیلئے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے چیئرمین اسلامی تحریک طلبہ پاکستان غلام عباس صدیقی،ترجمان محمد عدنان کا گذشتہ روز پنجاب یونیورسٹی کا دورہ تحریک کے ذمہ داران ،کارکنان،حمایتیوں سے ملاقاتیں کیں ۔اس موقعہ پر چیئرمین تحریک غلام عباس صدیقی نے کہا کہ پاکستان کو قومی زبان پر مشتمل یکساں نظام تعلیم کی اشد ضرورت ہے جو اسے ایک قوم بننے میں مدد دے گا ،تعلیمی اداروں پر حملے کرنے والے انسانیت ہی علم ،تعلیم کے بھی دشمن ہیں۔

متحد ہوکر ان کا مقابلہ کرنا ہوگا حکومت سیکورٹی کو مزید بہتر بنائے ۔حکومتی اقدام قابل ستائش ہیں مگر ابھی بہترین نہیں ہیں مزید اقدام کی ضرورت ہے ،انہوں نے کہا کہ اسلامی تحریک طلبہ تعمیر پاکستان پر یقین رکھتی ہے مثبت انداز میں تعلیمی اداروں میں سرگرم عمل ہے وطن دشمن عناصر کو شکست دینا اسلامی تحریک طلبہ کا مقصد ہے ،طلبہ حقوق کیلئے تحریک کا کردار ایک تاریخ کی حیثیت رکھتا ہے کسی قیمت پر طلبہ حقوق سے دستبردار نہیں ہوں گے ۔حکومت تعلیمی اداروں میں باحیاء ماحول پیدا کرنے کیلئے طلبہ وطالبات کیلئے الگ الگ تعلیمی ادارے قائم کرے ،مخلوط نظام تلعلیم نے اسلامی نظریہ حیات کو شدید متاثر کیا ۔سیکولر ازم کا راستہ مخلوط نظام تعلیم ختم کرکے کیا جا سکتا ہے محمد عدنا ن نے کہا کہ حقیقی اسلام پاکستان ہماری منزل ہے جس کیلئے اسلامی تحریک طلبہ کے کارکنان جدوجہد کررہے ہیں تعلیمی اداروں کے طلبہ پاکستان کو حقیقی اسلامی،فلاحی ریاست بنانے کیلئے اسلامی تحریک طلبہ کا ساتھ دیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -