رشتہ ٹھکرائے جانے پر نچلی ذات کی اسسٹنٹ پروفیسر نے خودکشی کرلی، مرنے کے بعد محبوب سے ماتھے پر بندیا لگانے کی آخری خواہش

رشتہ ٹھکرائے جانے پر نچلی ذات کی اسسٹنٹ پروفیسر نے خودکشی کرلی، مرنے کے بعد ...
رشتہ ٹھکرائے جانے پر نچلی ذات کی اسسٹنٹ پروفیسر نے خودکشی کرلی، مرنے کے بعد محبوب سے ماتھے پر بندیا لگانے کی آخری خواہش

  

حیدر آباد (ویب ڈیسک) بھارتی ریاست آندھرا پردیش کے شہر نیلور میں ذات پات کی وجہ سے محبوب کے گھر والوں کی طرف سے رشتہ ٹھکرائے جانے پر کالج کی خاتون اسسٹنٹ پروفیسر نے زہرکھا کر خودکشی کرلی۔ بتایا گیا ہے کہ نچلی ذات سے تعلق رکھے والی مدھاوی نیلور کے ڈی بی ایس کالج میں اسسٹنٹ پروفیسر اور بھانوتیجا نامی لڑکے سے محبت کرتی تھی۔ جانو کے گھر والوں نے ذات کی اونچ نیچ پر رشتہ سے انکار کردیا جس پر مدھاوی نے خودکشی سے قبل اپنی سیلفی والی ویڈیو بنائی جس میں اس نے بھانو سے آخری خواہش کرتے ہوئے کہا کہ مرنے کے بعد وہ اسکے ماتھے پر بندیاں لگائے اور ہاتھوں میں چوڑیں پہنائے۔

مزید :

بین الاقوامی -