سعودی اتحاد میں شمولیت کا فیصلہ تفصیلات آنے پر کریں گے: سیکرٹری خارجہ

سعودی اتحاد میں شمولیت کا فیصلہ تفصیلات آنے پر کریں گے: سیکرٹری خارجہ
سعودی اتحاد میں شمولیت کا فیصلہ تفصیلات آنے پر کریں گے: سیکرٹری خارجہ

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) سیکرٹری کارجہ اعزاز احمد چودھری نے کہا ہے افغان حکومت اور طالبان کے درمیان بات چیت اس ماہ کے آخر تک متوقع ہے، پاکستان چاہتا ہے کہ افغان مصالحتی عمل آگے بڑھے۔ سینیٹ کی قائمہ کمیٹی امور خارجہ نے حکومت پر زور دیا کہ دہشت گردی کے خلاف سعودی اتحاد میں تعاون کے معاملہ پر احتیاط سے کام لے۔ قائمہ کمیٹی کا اجلاس پارلیمنٹ ہاﺅس میں چیئرپرسن نزہت صادق کی صدارت میں ہوا۔ ارکان نے تحفظات اور تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شام کے معاملہ میں مداخلت یا ملوث ہونے سے اجتناب کیا جائے ورنہ ملک کے اندر سخت منفی اثرات مرتب ہوسکتے ہیں، ہر قیمت پر قومی مفادات کا تحفظ کیا جائے اور غیر جانبداری سے کام لیا جائے۔ پاکستان سعودی عرب سے تعلقات کو بہت زیادہ اہمیت دیتا اور تعلقات مزید مضبوط بنانا چاہتا ہے۔ اعزاز احمد چودھری نے وزیراعظم کے سعودی عرب اور ایران کے دورہ سے متعلق کمیٹی کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ اسلامی دنیا نے دونوں ملکوں کے درمیان کشیدگی کم کرانے کیلئے پاکستان کی کوششوں کو سراہا ہے، پاکستان انسداد دہشت گردی کے لئے 34 ملکی اتحاد کے قیام کا خیرمقدم کرتا ہے۔ رکن ممالک کی سرگرمیوں اور کردار کے بارے میں تمام رکن ممالک کے مابین مشاورت سے فیصلہ کیا جائے گا۔ وزیراعظم کے مشیر امور خارجہ سرتاج عزیز نے کمیٹی کو بتایا کہ افغان امن عمل پر حالیہ پیشرفت کو امریکہ نے سراہا ہے۔

مزید :

اسلام آباد -