انٹرنیٹ سکیورٹی کمپنی کا سکائپ صارفین کیلئے وائرس کا انتباہ

انٹرنیٹ سکیورٹی کمپنی کا سکائپ صارفین کیلئے وائرس کا انتباہ
انٹرنیٹ سکیورٹی کمپنی کا سکائپ صارفین کیلئے وائرس کا انتباہ

  

نیویارک (ویب ڈیسک) ایک نئی قسم کا میل وئیر سکائپ صارفین کو ہدف بنا کر ان کی بات چیت کو ریکارڈ اور سکرین شاٹ بنا لیتا ہے۔ یہ انتباہ ایک انٹرنیٹ سکیورٹی کمپنی پالو الٹو نے جاری کیا ہے جس کے مطابق یہ ” ٹروجن وائرس ٹی 9000 “ درحقیت ” بیک ڈورمیل وئیر “ ہے۔ کمپنی نے کہا کہ یہ بہت پچیدہ اور یہ خود کو انتہائی طاقتور اینٹی وائرس سافٹ وئیرز سے بھی چھپانے کی صلاحیت رکھتاہے جس کے باعث اسے پکڑنا انتہائی مشکل ہوتا ہے ۔ کمپنی نے بتایا ہے کہ اے وی جی، میکانی اور نارٹن وغیرہ بھی اس میل وئیر کو پکڑنے میں ناکام رہے ہیں اور یہ اسکائپ صارفین کی معلومات جمع کرنے کا کام کرتا ہے ۔ اس نے مزید بتایا کہ یہ خود کو کریٹیکل فائلز میں کسی نام سے چھپالیتا ہے۔ کمپنی کے مطابق یہ کمپیوٹر کو اس وقت ہدف بناتا ہے جب کوئی صارف مشکوک آرٹی ایف فائل اوپن کرتا ہے اور اسے کھولنے کیلئے مائیکرو سافٹ ورڈ کا انتخاب کرتاہے۔ یہ وائرس متعدد جگہوں پر خود کو انسٹال کر لیتا ہے تاکہ کوئی بھی اینٹی وائرس پروگرام اسے پکڑنہ سکے اور اس کے بعد متاثرہ سسٹم سے معلومات اکٹھی کر کے ہیکر کے سرور پر بھیجنے لگتا ہے۔ یہ میل وئیرٹی 5000 کا زیادہ جدید ورژن ہے جو سب سے پہلے 2013 ءمیں سامنے آیا تھا۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -