سعودی عرب اور بحرین نے مل کر ایران کے خلاف اب تک کا سب سے خطرناک قدم اٹھالیا، بہت بڑا تنازعہ پیداہونے کا خطرہ!

سعودی عرب اور بحرین نے مل کر ایران کے خلاف اب تک کا سب سے خطرناک قدم اٹھالیا، ...
سعودی عرب اور بحرین نے مل کر ایران کے خلاف اب تک کا سب سے خطرناک قدم اٹھالیا، بہت بڑا تنازعہ پیداہونے کا خطرہ!

  

منامہ (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب اور ایران کے تنازعہ نے سفارتی و تجارتی میدانوں سے ہوتے ہوئے اب سمندروں کا رخ کرلیا ہے، جہاں یہ کشیدگی ایک انتہائی تشویشناک رخ اختیار کرتی نظر آ رہی ہے۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق سعودی عرب اور بحرین نے اپنی سمندری حدود میں ایرانی بحری جہازوں کے داخلے پر پابندی عائد کردی ہے، جس کے بعد خطے میں بڑے تنازعے کے خدشات پیدا ہو گئے ہیں۔

مزیدجانئے: سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات اعلان کرتے رہ گئے، ایک اور مسلم ملک نے اپنی فوجیں شام پہنچا بھی دیں، لڑائی شدت اختیار کرنے کا امکان

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی نے مقامی ایجنٹوں اور انشورنس کمپنیوںکے حوالے سے بتایا ہے کہ ایران کو تجارتی و اقتصادی میدان میں الگ تھلگ کرنے کے لئے اور خصوصاً تیل کی تجارت میں مشکلات پیدا کرنے کے لئے، ایرانی پرچم بردار بحری جہازوں کے بحرین اور سعودی پانیوں میں داخلے پر خاموشی سے پابندی عائد کی جاچکی ہے۔ ناروے کی کمپنی Gard، جو کہ بحری جہازوں کے انشورنس کا کام کرتی ہے، کا تو یہاں تک کہنا ہے کہ بحرین نے ان تمام بحری جہازوں کے داخلے پر بھی پابندی عائد کردی ہے کہ جنہوں نے اپنے گزشتہ تین پڑاﺅ میں سے کوئی ایک پڑاﺅ بھی کسی ایرانی بندرگاہ پر کیا ہو۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اگرچہ ایران سے بین الاقوامی پابندیاں اٹھائی جاچکی ہیں لیکن اس کے باوجود سعودی عرب کے ساتھ اس کے تنازعے کی وجہ سے آنے والے دنوں میں خطے کے امن کو لاحق خطرات بڑھتے نظر آ رہے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -