اراکین اسمبلی کے کہنے پر متعدد قتل کیے ،مخالفین کو قتل کرنے کے لیے سرکاری مشینری کی مدد حاصل تھی ،عزیر بلوچ کے انکشافات

اراکین اسمبلی کے کہنے پر متعدد قتل کیے ،مخالفین کو قتل کرنے کے لیے سرکاری ...
اراکین اسمبلی کے کہنے پر متعدد قتل کیے ،مخالفین کو قتل کرنے کے لیے سرکاری مشینری کی مدد حاصل تھی ،عزیر بلوچ کے انکشافات

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک )لیاری گینگ وار کے سرغنہ عزیر بلوچ نے انکشاف کیا ہے کہ متعدد اراکین اسمبلی کے کہنے پر قتل کیے اور بابا لاڈلا کے ساتھ ملکر مخالفین کوبھی سرکاری مشینری کی مدد سے قتل کیا ۔عزیر بلوچ کا کہنا ہے کہ ذو الفقار مرزا نے بھی مختلف کارروائیوں میں ساتھ دیا ہے۔

نجی نیوز چینل اے آر وائی نیوز کے مطابق لیاری گینگ وار کے گرفتار ملزم عزیر بلوچ نے دوران تفتیش مزید انکشا فات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ لوگوں کوپولیس کی مدد سے قتل کرتا تھااور کئی تھانوں کے ایس ایچ اوز اس کے لیے کام کرتے تھے ۔اس کا کہنا تھا کہ غفار ذکری کے درجنوں لڑکوں کو جعلی پولیس مقابلوں میں قتل کروایا ،ارشد پپو کو بھی پولیس افسران موبائل میں اغوا کر کے لائے تھے ،پولیس افسران کو کام کرنے کے لیے لاکھوں روپے اور پلاٹ دئیے جاتے تھے ۔عزیر بلوچ نے مزید کہا کہ غفار ذکری کے بھائی کو علی محمد محلے سے پولیس موبائل میں لے کرآئے تھے ۔

مزید :

کراچی -