تحریک آزادی کوکمزور کرنیوالوں کیخلاف فتویٰ جاری کیا جائے ،علما ء کا مولانا سمیع الحق سے مطالبہ

تحریک آزادی کوکمزور کرنیوالوں کیخلاف فتویٰ جاری کیا جائے ،علما ء کا مولانا ...

اسلام آباد(آئی این پی)دفاع پاکستان کونسل کے تحت منعقد آل پارٹیز کانفرنس میں علماء کرام نے کونسل کے سربراہ مولانا سمیع الحق سے حافظ سعید کی نظربندی اور تحریک آزادی کشمیر کو کمزور کرنے والی جماعتوں کو آئندہ ووٹ نہ دینے کا فتویٰ جاری کرنے کا مطالبہ کردیا ہے،مولانا سمیع الحق نے خبردار کیا ہے کہ یہ فتویٰ جاری کرنے کا موقع آسکتا ہے۔ علما کرام نے واضح کیا ہے کہ محمدنوازشریف کی جماعت(ن) لیگ کو قومی اسمبلی کے ہر حلقے میں دائیں بازو کا 50سے60ہزار ووٹ ملتا ہے دینی طبقہ کو دیوار سے لگانے پر ن لیگ کو اب یہ ووٹ ایسے نہیں ملے گا، توہین رسالت کی سزا کے قانون کو ختم کرنے کی کوشش کرنے والے ختم ہوجائیں گے لیکن یہ قانون کبھی ختم نہیں ہوگا ملک بھر میں شدیداحتجاج کے ذریعے سے حافظ سعید کی رہائی کو ممکن بنائیں گے ۔ جمعرات کو آل پارٹیز کانفرنس اسلام آباد میں ہوئی دفاع پاکستان کونسل کے چیرمینمولانا سمیع الحق نے صدارت کی ۔سابق وزیراعظم آزادکشمیر سردار عتیق احمد نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وہ دفاع پاکستان کونسل کے ایجنڈے کی مکمل حمایت کرتے ہیں،پاکستان کے تشخص دفاع آزادی کشمیر کا معاملہ ہے، حکمرانوں کی طرف سے بھارت کو آہستہ آہستہ پاکستان میں مختلف شعبوں میں رسائی دی جارہی ہے،پاکستان کے پانی سے دستبردار ہونے کی کوشش کی جارہی ہے،کشمیر دفاع اور خارجہ پالیسیاں واضح ہونی چاہیں،ڈان لیکس کے ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی جائے، حافظ سعید کی نظر بندی کے خلاف آزادکشمیر میں بھی احتجاج ہوگا۔پاکستان عوامی تحریک کے سیکرٹری جنرل خرم نوازگنڈاپور نے کہاکہ جب لاہور اور گجرات کے قاتل اکھٹے ہوجائیں تو کشمیر تو بیچا جائے گا،حکومت کا ایجنڈا پہلے دن سے ظاہر ہوگیا تھا،ہمیں ہی بیچتے اور ہم کو ہی خریدتے ہیں،گلابی پگڑی پہن کر تلک لگا کر ڈانس ہورہے ہیں،شوگرملز میں 42بھارتی انجینئرز آئے ہوئے ہیں ان سے 10سال کے معاہدے کئے گئے ہیں،پولیس تھانوں سے ان بھارتی انجینئرز کو استثنی حاصل ہے ٰ کسٹم اور ایف آئی اے ان کو نہیں پوچھ سکتی،جو اپنا وزن نہیں اٹھا سکتے وہ مشیرخارجہ اور معاون خصوصی ہیں،پاکستان کو بھاری قرضوں ں میں جکڑا جارہا ہے تاکہ پاکستان کے ایٹمی پروگرام پر سمجھوتہ کروایا جاسکے،ہمیں شریف براداران کی طرف سے 30ملین ڈالر کی پیشکش کی گئی کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کو بھول جائیں پولیس وعدہ حقائق گواہ بننے کو تیار ہیں، واضح کردینا چاہتا ہوں خۃ سب کو تنہا تنہا کرکے مارنے کی سازش کی جارہی ہے ۔ پنجاب کی زرخیزی کشمیر کی مرہون منت ہے، آواز بلند کر کے ہم کشمیریوں پر احسان نہیں کر رہے ہیں،نوازشریف کا ایجنڈا پاک فوج اور ریاست کو کمزور کرنا ہے،100لوگوں کو دن دیہاڑے گولیاں ماری گئیں،سپریم کورٹ سوئی رہی،کیا ان کی مائیں بہنیں نہیں ہیں،اب عوام کو کشمیر کے حوالے سے ذمہ داری ادا کرنا ہوگی،ذاتی مفادات کیلئے کشمیر کو بیچنے کی سازش ہورہی ہے۔امیر متحدہ جمعیت اہلحدیت پاکستان ضیاء اللہ شاہ بخاری نے حافظ سعید کی نظربندی کے خلاف ملی یکجہتی کونسل کے احتجاج کا خیرمقدم کیا،اور تجویز دی کہ بھر پورقانونی جنگ لڑی جائے،نوازشریف کی جماعت قومی اسمبلی کے ہر حلقے میں دائیں بازو کا 50سے60ہزار ووٹ لیتی ہے اب یہ ووٹ ایسے نہیں ملے گا۔پیر سید ہارون گیلانی نے کہاکہ سب کو تنہا کرکے مارا جائے گا،پاکستان جنگ کا میدان بننے کا خدشہ ہے ۔امیر تنظیم اسلامی حافظ عاکف سعید نے کہاکہ حافظ سعید کی نظربندی تمام عدل و انصاف کے تقاضوں کے منافی ہے،عالمی تنظیم تحفظ ختم نبوت کے سیکرٹری جنرل مولانا اللہ وسایا نے کہاکہ توہین کی سزاکے طے شدہ قانون کو متنازعہ بنانے کی کوشش کی جارہی ہے، اس قانون کو ختم کرنے کی کوشش کرنے والے ختم ہوجائیں یہ قانون کبھی ختم نہیں ہوگا۔سرپرست اعلیٰ تنظیم اہلسنت والجماعت پاکستان مولانا احمد لدھیانوی نے کہاکہ ان کی جماعت کے پنجاب میں 1ہزار کارکنوں کو نیشنل ایکشن پلان کے تحت قید کیا گیا تھا جبکہ تین چار ماہ کی نظربندی کے رہا کردیا کیونکہ کوئی قانونی جواز نہیں تھے ان کو گرفتار کیوں کیا گیا تھا ،مولانا اعظم طارق مرحوم کے صاحبزادے معاویہ اعظم ایک سال سے لاپتہ ہیں حکومت کہہ رہی ہے اسے علم نہیں ہے ،امریکی دباؤ پر ملک میں مذہبی جماعتوں کو کرش کیا جارہا ہے۔متحد ہو کر ان کا راستہ روکنا ہوگا،سوشل میڈیا کے ذریعہ فرقہ واریت اور فساد کروانے کی کوشش کی جارہی ہے،حکومت سپریم کورٹ میں اعتراف کرچکی ہے،میرا دہشتگردی سے کوئی تعلق نہیں مگر آج تک میرا بنک اکاؤنٹ بند ہے۔امیر جماعت اہل حدیث کے عبدالغفار صدر روپڑی نے کہاکہ تحریک آزادی کشمیر کو کمزور کرنے والوں کو ووٹ نہ دینے کا فتویٰ جاری کیا جائے،مولانا سمیع الحق نے کہا کہ وہ وقت بھی آسکتا ہے۔مرکزی جمعیت اہلحدیث کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل سید عتیق الرحمان شاہ نے کہاکہ کشمیر کی مضبوط آواز کوخاموش کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔جماعت اسلامی ضلع اسلام آباد کے امیرزبیر فاروق نے کہاکہ توہین کی سزاکے قانون کو چھیڑنے والے حکمران اپنا اقتدار برقرار نہیں رکھ سکیں گے۔ڈاکٹر عظمت اللہ سلطان نے پارلیمنٹ کے سامنے دھرنے کی تجویز دی۔مولانا فضل الرحمان خلیل نے کہاکہ حافظ سعید کی نظربندی حکومتی پالیسی نہیں بلکہ عالمی ایجنڈے ہے ،حکمران تحریک آزادی کشمیر کے خلاف ہیں جب بھی تحریک زوروں پر ہوتی ہے نوازشریف اپنا کردار ادا کرکے اس کو کمزور کرتے ہیں کارگل کے موقع پر بھی ایسا ہی ہوا، ہم ملک بھر میں احتجاج کریں گے اور حافظ سعید کی رہائی کو ممکن بنائیں گے

مزید : علاقائی