افغانستان میں نئی فضائی کارروائی کا مقصد سرحد پار دہشت گردی روکنا ہے: امریکی فواج

افغانستان میں نئی فضائی کارروائی کا مقصد سرحد پار دہشت گردی روکنا ہے: امریکی ...
افغانستان میں نئی فضائی کارروائی کا مقصد سرحد پار دہشت گردی روکنا ہے: امریکی فواج

  

واشنگٹن (آئی این پی)امریکی فوج کا کہنا ہے کہ انسداد دہشت گردی کے خلاف نئی فضائی کارروائیوں کا مقصد افغانستان کی جانب سے ہمسایہ ملکوں کو یقین دہائی کرانا ہے کہ دہشت گردوں کو وہاں محفوظ ٹھکانہ نہیں ملے گا، جو وہاں سے سرحد پار حملے کرنا چاہتے ہیں۔

امریکی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق امریکی فوج نے بتایا کہ فضائی حملوں کے دوران شمال مشرقی افغان صوبہ بدخشاں میں طالبان کے تربیتی کیمپوں کو ہدف بنا کر تباہ کیا جا رہا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ اِن دورافتادہ دشوار گزار علاقوں میں قائم یہ کیمپ چین کے خلاف دہشت گردی میں ملوث تنظیم کی سرگرمیوں کی بھی حمایت کرتے ہیں، جسے مشرقی ترکستان اسلامی تحریک (اِی ٹی آئی ایم) کے نام سے بھی جانا جاتا ہے۔امریکی بیان کے مطابق یہ تربیتی کیمپ افغانستان کے اندر ہونے والی دہشت گرد کارروائیوں کے ساتھ ساتھ چین اور تاجکستان کے سرحدی علاقے میں اِی ٹی آئی ایم کی دہشت گرد سرگرمیوں کی بھی حمایت کرتی ہیں۔ افغان سلامتی افواج شدت پسندوں پر بھی حملے کرتی ہیں جو داعش کی افغان شاخ سے منسلک ہیں جن کی یہ کوشش ہے کہ شمالی افغانستان میں پیر پختہ کیے جائیں۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید :

بین الاقوامی -