اکشے کمار کی فلم کی پاکستان میں نمائش پر پابندی عائد کر دی گئی

اکشے کمار کی فلم کی پاکستان میں نمائش پر پابندی عائد کر دی گئی
اکشے کمار کی فلم کی پاکستان میں نمائش پر پابندی عائد کر دی گئی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پنجاب فلم سینسر بورڈ نے بالی ووڈ اداکار اکشے کمار کی فلم ”پیڈمین“ کو کلیئرنس سرٹیفکیٹ دینے سے انکار کر دیا ہے اور پاکستان کے سینماءگھروں میں نمائش پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

فلم بورڈ کے ممبران کے مطابق فلم کے ممنوعہ موضوع کے باعث اسے پاکستانی سینماءگھروں میں پیش کئے جانے کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ وفاقی سینسر بورڈ نے بھی فلم کو این او سی دینے سے انکار کرتے ہوئے ملک بھر میں اس کی نمائش پر پابندی عائد کر دی ہے۔

دوسری جانب مقامی پروڈیوسرز نے اسلامی روایات، تاریخ اور ثقافت کو تباہ کرنے والی فلمیں خریدنے پر فلم ڈسٹری بیوٹرز کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ ایک فلم ڈسٹری بیوٹر نے انکشاف کیا کہ ”پیڈمین“ کو اس کے ممنوعہ موضوع کے باعث این او سی لیٹر نہیں ملا۔

ان کا کہنا تھا ”پیڈ مین سب سے پہلے آئی ایم جی سی کے امجد راشد کی جانب سے خریدی گئی لیکن جب انہوں نے فلم کا ٹریلر دکھایا تو انہیں یہ فلم امپورٹ کرنے سے روک دیا گیا۔ بعد ازاں ایچ کے سی نے بھی این او سی لیٹر کیلئے درخواست دی لیکن پھر اجازت نہ ملی۔“

ڈسٹری بیوٹر کے بعد این او سی نہ دینے سے متعلق جب ان کی ذاتی رائے پوچھی گئی تو ایک سینئر افسر نے بتایا گیا کہ ”ہمارے ہاں خواتین کے حیض کو لے کر مردوں کی سوچ کا تو آپ کو معلوم ہی ہے اور کوئی بھی اس معاملے پر بات نہیں کرنا چاہتا کیونکہ یہ ایک ممنوعہ موضوع ہے۔“

دوسری جانب ڈسٹری بیوشن کمپنیز اور فلم پروڈیوسرز بھی ایسی فلمیں خریدنے والے افراد کو تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ اس طرح کے لوگ پاکستان میں ہر قسم کی ہندی فلموں پر پابندی کا باعث بن سکتے ہیں۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ پیڈ مین کواس کے موضوع کے باعث بھارت میں ہی تنقید کا سامنا کرنا پڑا جبکہ اس طرح کے موضوعات پر مبنی فلمیں کو پاکستان میں نمائش کیلئے پیش کرنے کی کوئی وجہ سمجھ نہیں آتی۔

مزید :

تفریح -