ڈالر کی قیمت بڑھنے سے موبائل فونز کی قیمتوں کو بھی پر لگ گئے، 2600 روپے میں ملنے والا موبائل اب کتنے روپوں میں مل رہا ہے؟ پاکستانیوں کیلئے پریشان کن خبر آ گئی

ڈالر کی قیمت بڑھنے سے موبائل فونز کی قیمتوں کو بھی پر لگ گئے، 2600 روپے میں ملنے ...

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) امریکی ڈالر کی قیمت بڑھنے سے ملک میں مہنگائی کو بھی پر لگ گئے ہیں اور موبائل فونز کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہو گیا ہے جس کے باعث دکاندار اور خریدار دونوں ہی پریشان ہیں۔

ایک دکاندار کے مطابق جب ڈالر 108 روپے کا ہوا تو فی موبائل کی قیمت میں 500 روپے کا اضافہ ہو گیا اور جب ڈالر کی قیمت 110 روپے سے بڑھی تو فی موبائل کی قیمت میں 1000 روپے اضافہ ہو گیا۔ ایک اور دکاندار نے بتایا کہ ڈالر کی قیمت میں اضافے کے بعد کمپنیوں نے بھی قیمتوں میں اضافہ کر دیا ہے جبکہ بیرون ملک سے درآمد ہونے والی ”کٹوں“ کی قیمتوں میں بھی اضافہ ہوا ہے۔

مارکیٹ میں موبائل فون خریدنے کی غرض سے آئے ایک صارف نے بتایا کہ کچھ روز قبل وہ جو موبائل فون 2600 روپے میں خرید کر لے گیا تھا اب وہی موبائل فون 2800 روپے سے 3000 روپے میں مل رہا ہے۔

موبائل فون کے کاروبار سے وابستہ افراد کا کہنا ہے کہ موبائل فون کی درآمد پر ٹیکسوں میں اضافے اور روپے کی قدر کم ہونے سے سمگلنگ بڑھ گئی ہے جس کی روک تھام کیلئے حکومت کو اقدامات کرنے ہوں گے۔ ڈالر کی قیمت بڑھنے سے موبائل کی قیمتوں میں اضافہ ہوا تو مہنگے سمارٹ فونز کی قیمتوں میں بھی کمی ہو گئی ہے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...