پرویز مشرف کی طلبی کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست مسترد، غداری کیس میں ضابطہ فوجداری کا اطلاق ہوگا: عدالت

پرویز مشرف کی طلبی کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست مسترد، غداری کیس میں ضابطہ ...
پرویز مشرف کی عدالتی طلبی کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست مسترد، غداری کیس میں ضابطہ فوجداری کا اطلاق ہوگا: عدالت

  


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) خصوصی عدالت نے ضابطہ فوجداری کے اطلاق سے متعلق فیصلے سنا دیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ خصوصی عدالت کے پاس ضابطہ فوجداری کا اختیار ہے اور عدالت پرویز مشرف کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر سکتی ہے، عدالت نے پرویز مشرف کی عدالتی طلبی کے گزشتہ روز کے حکم کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست بھی مسترد کر دی ہے۔ غداری کیس میں ضابطہ فوجداری کے اطلاق سے متعلق فیصلہ جسٹس عرب نے سنایا، خصوصی عدالت نے وکیل استغاثہ اکرم شیخ اور پرویز مشرف کے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد بدھ کو فیصلہ محفوظ کر لیا تھا جو آج سنایاگیا ہے، عدالت نے اپنے مختصر فیصلے میں کہا ہے کہ خصوصی عدالت کے پاس ضابطہ فوجداری کا اختیار ہے اور عدالت پرویز مشرف کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری بھی جاری کر سکتی ہے۔ دوسری جانب عدالت نے ساب صدر پرویز مشرف کی عدالت طلبی کے خلاف حکم امتناعی کی درخواست بھی مسترد کر دی ہے۔ جسٹس فیصل عرب کی سربراہی میں خصوصی عدالت کے تین رکنی بینچ نے درخواست کی سماعت کی ، فیصلے میں کہاگیا ہے کہ خصوصی عدالت نے 16 جنوری کو پرویز مشرف کو طلب کر رکھا ہے، عدالت کے پاس اختیار نہیں کہ وہ اپنے کسی حکم کو تبدیل کر سکے۔ سابق صدر کے وکلاءنے پیشی کے حکم پر امتناع کی درخواست دائر کی تھی جس میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ عدالتی دائرہ اختیار پر فیصلہ کیا جائے۔

مزید : اسلام آباد /Headlines


loading...