حبس بے جاءکی درخواست پر کارروائی ،غیر قانونی حراست سے محبوس برآمد

حبس بے جاءکی درخواست پر کارروائی ،غیر قانونی حراست سے محبوس برآمد

 لاہور(نامہ نگار) ایڈیشنل سیشن جج شاہدہ سعید نے حبس بے جاءکی درخواست پر تھانہ ساندہ پولیس کی غیر قانونی حراست سے محبوس کو برآمد کروا کر آزاد کردیا عدالت نے سی سی پی او لاہور کو ذمہ داران پولیس ملازمین کےخلا ف بھی کارروائی کا حکم دیا ہے عدالت میں درخواست گزار اویس چیمہ نے اپنے وکیل چودھری بابر وحید کی وساطت سے دائر درخواست میں مو¿قف اختیار کیاتھا کہ سائل کے رشتہ دار وسیم کو ساندہ پولیس نے غیر قانونی طور پر اپنی حراست میں رکھا ہوا ہے ،عدالت سے استدعا ہے کہ اسے برآمد کروایا جائے ، عدالتی بیلف نے ساندہ تھانہ میں چھاپہ مار کر محبوس کو عدالت میں پیش کر دیا عدالتی بیلف نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ پولیس نے درخواست گزار کے رشتہ دار کو تھانہ کے ایک کمرے میں بند کررکھا تھا اور اس کی گرفتاری بھی نہیں ڈالی گئی تھی جبکہ پولیس نے عدالت میں مو¿قف اختیار کیا کہ محبوس سے دوران تلاشی پسٹل برآمد ہو اجس پر اسے گرفتار کیا گیا۔

 تاہم درخواست گزار کے وکیل نے بتایا کہ پسٹل کا لائسنس ہے جوپولیس کو دکھایا بھی گیاجس کے بعد عدالت نے وکلاءکے دلائل سننے کے بعد مبحوس کو آزاد کرنے کا حکم دیتے ہوئے سی سی پی او لاہور کو حکم دیا ہے کہ وہ اے ایس آئی نسیم خان اور ایس ایچ ا و کےخلاف قانون کے مطابق کاروائی عمل میں لائی جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4