چین نے لندن میں ہزاروں ٹن سونا ذخیرہ کرنے کیلئے قیمتی ترین چیز خرید ڈالی

چین نے لندن میں ہزاروں ٹن سونا ذخیرہ کرنے کیلئے قیمتی ترین چیز خرید ڈالی
 چین نے لندن میں ہزاروں ٹن سونا ذخیرہ کرنے کیلئے قیمتی ترین چیز خرید ڈالی

  

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) کسی بھی ملک کے سونے کے ذخائراس کی معیشت اور کرنسی کی قدر کے تعین میں کلیدی کردار ادا کرتے ہیں۔دنیا میں عام طور پر نیویارک ، لندن اور زیورخ میں سونا ذخیرہ کیا جاتا ہے اور لگ بھگ سبھی ممالک کا سونا انہی تین شہروں میں واقع مختلف بینکوں کے سونے کے والٹس (سٹورز) میں پڑا ہے۔ چین کا آئی سی بی سی بینک بھی کافی عرصے سے سونا ذخیرہ کرنے کے لیے لندن میں ایسے ہی کسی سٹور کی تلاش میں تھا مگر اب اس کی تلاش ختم ہو گئی ہے۔ ڈوئچے بینک لندن میں اپنا سونے کا والٹ فروخت کرنے جا رہا تھا جو آئی سی بی سی نے خرید لیا ہے۔ یہ والٹ 1500ٹن سونا ذخیرہ کرنے کی گنجائش رکھتا ہے۔ بین الاقوامی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ڈوئچے بینک نے لندن میں واقع اپنا یہ والٹ جون 2014ء میں ہی آپریشنل کیا تھا مگر حیران کن طور پر محض ڈیڑھ سال بعد ہی اسے فروخت کر دیا۔ریورٹ کے مطابق بینک کے قریبی ذرائع اس والٹ کے خریدے جانے کی تصدیق کر چکے ہیں۔ یہ والٹ برطانیہ کی سکیورٹی سروسز کمپنی ’’جی فور ایس‘‘ نے تعمیر کیا تھا اور وہی اس کا انتظام و انصرام سنبھالتی ہے۔ یہ والٹ لندن کے علاقے پارک رائل کمپلیکس میں واقع ہے۔ واضح رہے کہ چین کا آئی سی بی سی بینک اثاثوں کے تناسب سے دنیا کا سب سے بڑا بینک ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -