وزارت خارجہ نے بغیر واٹر مارک والی شناختی دستاویزات کی تصدیق روک دی

وزارت خارجہ نے بغیر واٹر مارک والی شناختی دستاویزات کی تصدیق روک دی

  

اسلام آباد(اے این این) وزارت خارجہ نے نادرا کی جانب سے واٹر مارک والے پیپر پر شناختی کاغذات جاری نہ کرنے پر ملک میں کاغذات کی تصدیق کا عمل روک دیا ہے اور نادرا کی جانب سے بھیجی گئی شناختی و دیگر دستاویزات کی عکسی کاپیوں کی تصدیق سے انکار کر دیا ہے ۔ وزارت خارجہ کے انکار کرنے کے سبب سینکڑوں افراد کے شناختی کاغذات کا تصدیقی عمل رک گیا ہے۔ وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ شناختی دستاویزات کیلئے سادہ کاغذ کے استعمال کی تصدیق ہونے سے دہشت گرد و دیگر جرائم پیشہ عناصر اس کا غلط استعمال کر سکتے ہیں۔ 2 دسمبر سے نادرا کیجانب سے جاری ہونیوالے سینکڑوں کاغذات کی وزارت خارجہ سے تصدیق نہیں ہو سکی۔وزارت خارجہ کی جانب سے نادرا کو لکھے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ سکیورٹی واٹر مارک والے کاغذات کے استعمال کا عمل بحال کیا جائے یا سسٹم تک رسائی دی جائے۔ وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ سادہ کاغذ کی تصدیق کے لئے ہمارے پاس کوئی سسٹم موجود نہیں ہے۔ وزارت خارجہ کی جانب سے نادرا کو 2 لیٹر لکھے جانے کے باوجود کوئی جواب نہ آیا۔ نئی پالیسی کے تحت واٹر مارک سکیورٹی کی بجائے سادہ پیپر پر کاغذات جاری کئے جا رہے ہیں۔

وزارت خارجہ

مزید :

کراچی صفحہ اول -