نیشنل ٹیرف کمیشن ایکٹ کو کاروبار دست بناے کیلئے اصلاحات متعارف

نیشنل ٹیرف کمیشن ایکٹ کو کاروبار دست بناے کیلئے اصلاحات متعارف

  

 لاہور (کامرس ڈیسک) چیئرمین نیشنل ٹیرف کمیشن قاسم ایم نیاز نے کہا ہے کہ نیشنل ٹیرف کمیشن ایکٹ 2015کو کاروبار دوست بنانے کے لیے ضروری اصلاحات متعارف کرائی اور ترامیم کی گئی ہیں۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار لاہور چیمبر میں منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ لاہور چیمبر کے صدر عبدالباسط اور نائب صدر ناصر حمید خان نے ٹیرف معاملات اور اینٹی ڈمپنگ ڈیوٹی سمیت دیگر معاملات پر اظہار خیال کیا۔ نیشنل ٹیرف کمیشن کی ممبر روبینہ اطہر، لاہور چیمبر کے ایگزیکٹو کمیٹی اراکین اویس سعید پراچہ، میاں زاہد جاوید، ذیشان خلیل، میاں عبدالرزاق، معظم رشید، طارق محمود، سابق ایگزیکٹو کمیٹی اراکین کمال محمود امجد میاں، خواجہ خاور رشید، تنویر احمد صوفی اور مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے ماہرین نے سیمینار سے خطاب کیا۔ چیئرمین نے کہا کہ نیشنل ٹیرف کمیشن ٹیرف اور تجارتی معاملات اور مقامی صنعتوں کی معاونت کرتا ہے۔ لاہور چیمبر کے صدر عبدالباسط نے کہا کہ ملک میں ضروری درآمدات کے توازن کو قائم رکھنے میں نیشنل ٹیرف کمیشن بہت اہمیت کا حامل ہے۔ اس کی کارکردگی کا بہتر اورمؤثر ہونا انتہائی ضروری ہے کیونکہ مقامی صنعتوں کو ہر صورت اُن اثرات سے بچانا ہوتا ہے جن کی وجہ سے اُن کی بقاء اور ترقی ممکن ہوسکے۔ اس کے ساتھ ساتھ یہ بھی ضروری ہے کہ مقامی انڈسٹری اپنے اندر مقابلے کی سکت بڑھائے۔ انہوں نے کہا کہ ٹیرف اصلاحات وقت کی اہم ضرورت ہیں، ایسی اشیاء جن کی سمگلنک پر قابو نہیں پایا جاسکا ان پر ٹیرف کی شرح کم کی جائے۔ لاہور چیمبر کے نائب صدر ناصر حمید خان نے تجارتی قوانین ، نئے نیشنل ٹیرف کمیشن ایکٹ 2015ء اور دیگر متعلقہ معاملات پر تاجروں کو آگاہی دینے کے لیے سیمینارز منعقد کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ اس موقع پر شرکاء نے پالیسی سازی میں نیشنل ٹیرف کمیشن اور فیڈرل بورڈ آف ریونیو کے کردار سمیت دیگر سوالات پوچھے۔

مزید :

کامرس -