قومی خزانے کے چو ر اقتدار میں نہیں جیل میں ہونے چاہئیں،حامد رضا

قومی خزانے کے چو ر اقتدار میں نہیں جیل میں ہونے چاہئیں،حامد رضا

  

لاہور(خبر نگار خصوصی) سنی اتحاد کونسل پاکستان کے چیئرمین صاحبزادہ حامد رضا نے کہا ہے کہ قومی خزانے کے چو ر اقتدار میں نہیں جیل میں ہونے چاہئیں۔ حکومتی وزراء عوام کی خدمت کی بجائے کرپٹ حکمرانوں کو بچانے میں مصروف ہیں۔ صوفیاء کے پیروکار آئندہ الیکشن میں اہم کردار ادا کریں گے۔ اہل حق کو متحد کرکے بڑی سیاسی قوت بنائیں گے۔ درود والوں کا اتحاد بارود والوں کے سیاسی سرپرستوں کی موت ثابت ہو گا۔ قوم حکمرانوں سے نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد نہ ہونے کا جواب مانگ رہی ہے۔ مولانا فضل الرحمن کی سیاست اسلام نہیں اسلام آباد کیلئے ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر طارق ولی چشتی کی قیادت میں ملاقات کرنے والے مشائخ کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ صاحبزادہ حامد رضا نے مزید کہا کہ مشائخ خانقاہوں سے نکل کر رسمِ شبیری ادا کریں۔ قیام پاکستان کے مخالفین کانگریسی ملّاں نواز شریف کے اتحادی ہیں۔ اچکزئی اور فضل الرحمن جیسے لوگوں کو اتحادی بناکر نواز شریف نے قائد اعظم کی روح کو تڑپا یا ہے۔ قومی کشمیر کمیٹی کا چیئرمین تبدیل کیا جائے۔ فضل الرحمن نے کشمیر کمیٹی کو عضوِ معطل بنا رکھا ہے۔ صاحبزادہ حامد رضا کا مزید کہناتھا کہ کرپشن کی دیمک نے ملک کو کھوکھلا کردیا ہے۔ مفاداتی سیاست کو ختم کرکے نظریاتی سیاست شروع کرنے سے قیام پاکستان کے مقاصد پورے ہوسکتے ہیں۔ روحانی خانقاہوں کے سجادہ نشین متحد ہوکر سیاست میں اپنا کردار ادا کریں۔ درود والے ملک کی حقیقی طاقت ہیں۔ نظام مصطفی کے نفاذ سے ہی نیا پاکستان وجود میں آسکتا ہے۔ نظام مصطفی کی حامی قوتیں متحد ہو جائیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -