حقوق کے نام پر کسی قانون پر عملدرآمد نہیں ہوا،خواتین ارکان اسمبلی

حقوق کے نام پر کسی قانون پر عملدرآمد نہیں ہوا،خواتین ارکان اسمبلی

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)خاتون محتسب پنجاب کی کارکردگی کے حوالے سے گفتگوکرتے ہوئے تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی سعدیہ سہیلرانا،پیپلز پارٹی کی فائزہ ملک اورق لیگ کی خدیجہ فاروقی نے کہا ہے کہ موجودہ دور حکو مت میں خواتین کے حقوق کے نام سے بنائے جانیوالے قانون پر عملی طور پر کام نہیں ہو سکا ، خاتون محتسب پنجاب کا ادارہ محض حکو متی خزا نہ پر بوجھ ہو نے کے سوا کچھ نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جب ادارہ بنا یا گیا تب حکمرانوں نے بلند وبا نگ دعوئے کرتے ہوئے تما م سرکاری و نیم سرکاری اداروں میں نوٹس آویزاں کر کے ہرا سمنٹ ایکٹ کے با رے میں آگا ہی دی جا ئے لیکن اس قانون کا کہیں بھی کو ئی نام ونشا ن دکھائی نہیں دیتا ۔انہوں نے کہا کہ پنجا ب میں روزا نہ متعدد خواتین کو ہرا سمنٹ کا سا منا رہتا ہے لیکن خاتون محتسب کے پاس2016میں صرٖف 40 مقدمات کا اندراج اس ادارہ کی کارکردگی کا منہ بو لتا ثبوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکو مت اس صورتحال کا فوری نوٹس لے اور متحرک خاتون محتسب کو تعینات کیا جائے تا کہ اس ادارہ کو بوجھ بنا نے کر بجا ئے کا رآمد بنایاجا سکے۔

مزید :

علاقائی -