محکمہ جنگلی حیات نے نجی بریڈنگ فارمز کی رپورٹ مانگ لی

  محکمہ جنگلی حیات نے نجی بریڈنگ فارمز کی رپورٹ مانگ لی

  



لاہور(لیڈی رپورٹر) محکمہ تحفظ جنگلی حیات و پارکس پنجاب کے تمام ریجنل اور ڈسٹرکٹ افسران سے ان کے علاقوں میں قائم پرائیویٹ وائلڈلائف بریڈنگ فارمز کی تفصیلی رپور ٹ طلب کرلی گئی۔ افسران کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پرائیویٹ وائلڈلائف بریڈنگ فارمز کے لائسنس، محکمہ کے وضح کردہ قواعد و وضوابط کے تحت جنگلی حیات کی افزائش کیلئے دستیاب سہولیات چیک کریں اور مالکان کے نام، مختص اراضی اور اس میں موجود جنگلی حیات کی اقسام کی تفصیلات پر مشتمل رپورٹ 3یوم کے اندر ہیڈ آفس کو ارسال کریں۔ اس امر کافیصلہ ڈی جی وائلڈلائف ا پنجاب سید طاہررضا ہمدانی کی زیر صدارت اجلاس میں کیا گیا جس میں ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈلائف ہیڈ کوارٹرز محمد نعیم بھٹی،ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈلائف پبلسٹی عامر مسعود، پراجیکٹ ڈائریکٹرگرین پاکستان پروگرام میاں حفیظ احمد اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر وائلڈلائف مینجمنٹ مدثر حسن کے علاوہ دیگر متعلقہ افسران نے بھی شرکت کی۔

ڈی جی وائلڈلائف نے کہا کہ بغیر لائسنس نجی بریڈنگ فارم کی موجودگی کی صورت میں نہ صر ف مالکان بلکہ متعلقہ علاقہ کے کنٹرولنگ افسر کیخلاف بھی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ صوبے بھر میں قائم پرائیویٹ وائلڈلائف بریڈنگ فارمز کی اے،بی، سی کیٹگریز کے لحاظ سے درجہ بندی کی جائے اس سے فارم مالکا ن میں مقابلے کارجحان پیدا ہوگا اور جنگلی حیات کے تحفظ اور افزائش میں بہتری آئے گی۔ سید طاہر رضا ہمدانی نے کہا کہ ہر نجی بریڈنگ فارم میں اس کو الاٹ کیٹگریزکے مطابق جنگلی جانورو پرندے رکھنے کے قانون پر عملدرآمد یقینی بنایا جائے۔انہوں نے مزید کہا کہ کوئی بھی نجی بریڈنگ فارم کیٹگری کے لحاظ سے مختص اراضی، جانوروں اور پرندوں کی تعداد میں اضافہ کرکے الاٹ شدہ کیٹگری کو محکمہ کی منظوری سے اپ گریڈ کر واسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ بریڈنگ فارم میں لائسنس کے تحت الاٹ کردہ کیٹگری سے ہٹ کررکھے گئے جانور اور پرندے ضبط کرلیے جا ئینگے اور متعلقہ بریڈنگ فارم مالکان کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ ڈ ائریکٹر جنرل نے کہا کہ تمام ریجنل اور ضلعی ا فسران اپنے دفاتر میں علاقے میں موجود بریڈنگ فارمز کی فہرست ان کے نام و پتہ کیساتھ آویزاں کریں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پرائیویٹ وائلڈلائف بریڈنگ فارمز کی بڑھوتری اوربہتری کی خواہاں ہے کیونکہ یہ ناصرف جنگلی حیات سے محبت کاذریعہ بلکہ جنگلی حیات کے تحفظ اور افزائش میں اضا فے کے اقدامات میں معاون ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1