سوشل میڈیا پر لڑکا بن کر درجنوں لڑکیوں کے ساتھ دھوکے کے ساتھ جنسی تعلق استوارکرنے پر سخت سزا سنا دی گئی

سوشل میڈیا پر لڑکا بن کر درجنوں لڑکیوں کے ساتھ دھوکے کے ساتھ جنسی تعلق ...
سوشل میڈیا پر لڑکا بن کر درجنوں لڑکیوں کے ساتھ دھوکے کے ساتھ جنسی تعلق استوارکرنے پر سخت سزا سنا دی گئی

  



لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن )برطانوی عدالت نے نوجوان لڑکی کوسوشل میڈیا ویب سائٹ پر لڑکا بن کر درجنوں لڑکیوں کو بے وقوف بنا کر جنسی استحصال کرنے کے الزام میں آٹھ سال قید کی سزا سنا دی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق نوجوان لڑکی پر الزام تھا کہ اس نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر لڑکا بن کر درجنوں لڑکوں کو بے وقوف بنایا اور ان کا جنسی استحصال کیا۔21سالہ جیما واٹس پر الزام ہے کہ اس نے سوشل میڈیا پر جیک واٹسن کے فرضی نام سے اپنا پیج بنایا اور اپنی عمر سولہ برس ظاہر کی، اس پیج کے ذریعے ا±س نے چودہ برس تک کی عمر کی لڑکی سے بھی تعلقات استوار کیے۔ جیما واٹس نے درجنوں لڑکیوں کے ساتھ دوستانہ مراسم بڑھا کر انہیں اپنی جنسی تسکین کے لیے استعمال کیا۔

21سالہ واٹس پر گزشتہ برس نومبر میں سات مختلف الزامات عائد کیے گئے تھے اور ان میں چار ایسی لڑکیاں شامل تھیں جن کی عمریں چودہ اور پندرہ برس کی تھیں۔نوجوان لڑکی نے اپنے سوشل میڈیا پرا یسی تصاویر استعمال کیں جن میں اس نے اپنے بال پیچھے کی جانب باندھ رکھے ہیں اور مکمل طور پر لڑکے کا بھیس بنا رکھا ہے ۔

نوجوان لڑکی لڑکا بن کر اپنے پیج کے ذریعے نوجوان لڑکیوں کو ملاقات کی ترغیب دیتی تھی جبکہ وہ اپنے مقاصد کے حصول کیلئے انگلینڈ میں ٹرین کے ذریعے بھی سفر کیا کرتی تھی جس کے باعث لڑکیوں کو ایسا یقین ہوجا تا تھا کہ وہ سولہ برس کے نوجوان کے ساتھ گہرے روابط قائم کرنے میں کامیاب رہیں ہیں ۔

مزید : بین الاقوامی


loading...