غزہ کی پٹی میں انسانی المیے کی ذمہ داری عالمی برادری پر عائد ہوتی ہے،ریڈ کراس

غزہ کی پٹی میں انسانی المیے کی ذمہ داری عالمی برادری پر عائد ہوتی ہے،ریڈ کراس

غزہ (این این آئی)انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ریڈ کراس نے کہا ہے کہ غزہ کی پٹی میں انسانی المیے کی ذمہ داری عالمی برادری پرعائد ہوتی ہے۔ انسانی حقوق کی تنظیم نے غزہ کی پٹی میں انسانی بحران کا مستقل حل نکالنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ریڈ کراس کی ترجمان سہیر زقوت نے ایک انٹرویو میں کہا کہ جولائی 2014 ء میں غزہ کی پٹی پر مسلط کی گئی اسرائیلی جنگ نے اہلیان غزہ کی مشکلات میں بے پناہ اضافہ کیا۔ فلسطینیوں کی ان مشکلات کی ذمہ داری عالمی برادری پرعائد ہوتی ہے جو اہالیان غزہ کو ریلیف فراہم کرنے میں ناکام رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ غزہ کی پٹی میں انسانی المیے کا مستقل بنیادوں پر حل تلاش کرنے کی ضرورت ہے تاکہ جنگوں اور معاشی محاصرے سے تباہی سے دوچار علاقے کے عوام کو سکھ کا سانس لینے کا موقع فراہم کیا جاسکے۔ سہیر زقوت نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ غزہ کی پٹی میں پچھلے سال مسلط جنگ کے بعد کی صورتحال جنگ سے پہلے کے حالات سے زیادہ خوفناک ہوچکی ہے۔ اسرائیلی حکومت کی جانب سے غزہ کی پٹی کے شہریوں کی نقل ورحرکت پرپابندیاں عائد کرنے کیساتھ غزہ کو اشیائے ضروریہ کی فراہمی بھی روک دی ہے۔ پانی اور بجلی جیسی بنیادی سہولیات ناپید ہیں۔ ہسپتالوں میں ادویات نہیں مل رہیں۔ شہری بیروزگار ہیں اور غربت میں آئے روز اضافہ ہو رہاہے۔

مزید : عالمی منظر


loading...