سیشن کورٹ :تھانے میں 2گروپوں کے درمیان فائرنگ سے 2افراد کی ہلاکت کے مقدمہ کے تمام ملزم بری

سیشن کورٹ :تھانے میں 2گروپوں کے درمیان فائرنگ سے 2افراد کی ہلاکت کے مقدمہ کے ...
سیشن کورٹ :تھانے میں 2گروپوں کے درمیان فائرنگ سے 2افراد کی ہلاکت کے مقدمہ کے تمام ملزم بری

  


لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج منیراحمد خان نے 19سالہ پرانے قتل کے مقدمہ کا فیصلہ سناتے ہوئے اس میں ملوث 7ملزمان کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے بری کردیا ۔استغاثہ کے مطابق 1996ءمیں تھانہ جنوبی چھاونی میں خالد نامی شخص کی قتل کی تفتیش کے دورن 2 گروپوں طارق محمود اور مقصود گروپ کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس سے 2 افراد احمد دین اور احمد علی تھانے میں ہی ہلاک ہو گے تھے جس پر عدالت نے طارق محمود گروپ کے طارق سعید مزمل وغیرہ جبکہ مقصود گروپ کے محمد نذیر نیامت علی وغیرہ کے خلاف کراس فائرنگ کا مقدمہ درج کرکے چالان پیش کردیا چالان عدالت میں آنے پر قانونی پیچیدگیاں پیدا کی گئیں جس کی وجہ سے یہ کیس التوا میں پڑا رہا جس کے بعدچالان کو ایڈیشنل سیشن جج منیر احمد خان کی عدالت میں بھجوا دیا گیا تھا،گزشتہ روز عدالت وکلاءاور فریقین کے دلائل سننے کے بعد مذکورہ بالا حکم جاری کردیا ہے ۔

مزید : لاہور


loading...