بھارتی جیل میں 10 سال سزا مکمل کرنیوالا پاکستانی وطن واپسی کا منتظر

بھارتی جیل میں 10 سال سزا مکمل کرنیوالا پاکستانی وطن واپسی کا منتظر

لاہور ( این این آئی) بھارت میں قید پاکستانی شہری عمران قریشی 10 سال کی سزا کاٹنے کے بعد بھی رہا نہیں ہوسکا ۔عمران قریشی گلشن اقبال کراچی کا رہائشی ہے جو 2004ء میں ایک بھارتی خاتون سے شادی کے لیے بھارت گیا اور شادی کے بعد واپس آنے کی بجائے وہیں بھوپال میں ہی مقیم ہوگیا ،وہاں کی مقامی پولیس نے عمران قریشی کو 2008ء میں گرفتار کیا جس کے بعد اسے بھارت میں غیر قانونی قیام کے جرم میں 10 سال کے لئے جیل بھیج دیا گیا ،عمران قریشی کی سزا 19 جنوری 2018ء میں مکمل ہوگئی جس کے بعد مارچ میں اسے جیل سے بھوپال کے گارڈین تھانے منتقل کردیا گیا جہاں اب وہ اب گزشتہ چارماہ سے مقیم ہے۔پاکستان اور بھارت میں دوستی کے فروغ کے لیے کام کرنے والی تنظیم آغاز دوستی نے عمران قریشی کی رہائی کے لئے دونوں ملکوں کے حکام سے مددکی اپیل کی ہے تاکہ عمران قریشی واپس اپنے ملک پاکستان آسکے، عمران قریشی نے جس خاتون سے شادی کی تھی اس کے بارے میں کوئی تفصیلات سامنے نہیں آسکیں اورنہ ہی ان کی طرف سے عمران قریشی کی رہائی کے لیے کوئی کوششیں سامنے آئیں۔

بھارتی جیل

مزید : علاقائی