بلاول بھٹو کو روکنے کا معاملہ ، الیکش کمیشن کا نگراں وزیر اعلٰی پنجاب کو خط، انکوائری کی ہدایت

بلاول بھٹو کو روکنے کا معاملہ ، الیکش کمیشن کا نگراں وزیر اعلٰی پنجاب کو خط، ...

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)الیکشن کمیشن پاکستان نے چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری اور انکی ریلی کو اوچ شریف میں روکنے پر نگراں وزیر اعلیٰ پنجاب پروفیسر حسن عسکری کو خط لکھ دیا۔الیکشن کمیشن کی جانب سے لکھے گئے خط میں انہیں واقعہ کی انکوائری کی ہدایت کی گئی ہے اور کہا گیا ہے کہ پیپلز پارٹی نے بلاول بھٹو کی ریلی کو اوچ شریف جانے سے روکنے کی تحریری شکایت کرتے ہوئے واقعہ میں اعلیٰ پولیس اور سیاسی جماعت کے نمائندوں کے درمیان گٹھ جوڑ کا الزام عائد کرنے سمیت ڈی آئی جی بہاولپور کے کردار پر انگلی اٹھائی ہے، ساتھ ہی ایک علیحدہ درخواست میں انسپکٹر جنرل پنجاب، ڈی پی اور بہاولپور، ڈی ایس پی صفدر پر الزام عائد کیا گیا ہے۔الیکشن کمیشن نے خط میں کہا ہے اس معاملے کی جلد تحقیقات کرکے رپورٹ الیکشن کمیشن کو ارسال کی جائے۔ قبل ازیں میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا تھا پیپلز پارٹی نے الیکشن کمیشن پر زور دیا تھا کہ وہ پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کو اوچ شریف میں حضرت جمال الدین بخاری ؒ کے مزار کے دورے سے روکنے والے پولیس اہلکاروں کیخلاف کارروائی کرے۔پیپلز پارٹی کے سیکریٹری جنرل نیئر حسین بخاری کی جانب سے الیکشن کمیشن کے ہیڈکوارٹر کے دورے کے دوران ایک تحریری درخواست دی گئی تھی جس میں کہا گیا تھا ہفتے کی شام کو بلاول بھٹو زرداری نے ضلع بہاولپور کے اوچ شریف میں جلسے سے خطاب کیا لیکن اس جلسے سے قبل وہ حضرت جمال الدین بخاریؒ کے مزار کا دورہ کرنا چاہتے تھے تاہم جب پیپلز پارٹی کے چیئرمین کے قافلے نے مزار کی جانب جانے کی کوشش کی تو پولیس نے سڑک کو بند کردیا اور انہیں مزار کی جانب جانے کی اجازت نہیں دی گئی، اس موقع پر ’ڈیوٹی پر موجود ڈی ایس پی صفدر نے کہا انسپکٹر جنرل پنجاب پولیس اور ڈسٹرکٹ پولیس افسر کی ہدایت ہے کہ پیپلز پارٹی کی قیادت کو مزار پر نہ جانے دیا جائے، جو کہ سراسر آئین و قانون کیخلاف ہے کیونکہ انہوں نے آئین کے تحت نقل و حرکت کے بنیادی حقوق کو سلب کیا، اس حوالے سے پیپلز پارٹی کی رہنما شیری رحمن نے بھی الیکشن کمیشن کو خط لکھاتھاجس میں کہا گیا تھا انتخابات کے موقع پر اس طرح کی کارروائی آزادانہ، صاف اور شفاف الیکشن کے انعقاد کے حوا لے سے بنائے گئے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ہے، فوری نوٹس لیا جائے اور چاروں صوبوں کے امیدواروں کی سکیورٹی اور آسان نقل و حرکت یقینی بنائی جائے۔

الیکشن کمیشن خط

مزید : صفحہ اول