نوازشریف کے بعد زرداری کا نمبر لگ گیا، پاناما طرز کی جے آئی ٹی قائم لیکن اس کے سربراہ کون ہیں؟ جان کر ہی پیپلزپارٹی کے رہنماؤں کو دن میں تارے دکھائی دینے لگیں گے کیونکہ ۔ ۔ ۔

نوازشریف کے بعد زرداری کا نمبر لگ گیا، پاناما طرز کی جے آئی ٹی قائم لیکن اس ...
نوازشریف کے بعد زرداری کا نمبر لگ گیا، پاناما طرز کی جے آئی ٹی قائم لیکن اس کے سربراہ کون ہیں؟ جان کر ہی پیپلزپارٹی کے رہنماؤں کو دن میں تارے دکھائی دینے لگیں گے کیونکہ ۔ ۔ ۔

  

اسلام آباد(ویب ڈیسک)مختلف ذرائع سے اکٹھے کیے گئےریکارڈ کی روشنی میں ڈی جی ایف آئی اے بشیر میمن نے پانامہ طرز کی جے آئی ٹی قائم کر دی ہے تا کہ ان 65جعلی بینک اکائونٹس کی تحقیقات کی جا سکے جن کے ذریعے 70ارب روپے کی غیر قانونی رقم منتقل کی گئی۔ ابتدا میں منی لانڈرنگ کا حجم35ارب روپے تھا جو اب بڑھ کر70ارب روپے تک پہنچ گیا۔ ایک تحقیقاتی افسرنے نام نہ بتانےکی شرط پر بتایا کہ ہم فنانشل یونٹ، سٹیٹ بینک آف پاکستان اور دیگر چار نجی بینکوں سے تمام مشکوک ٹرانزیکشن کی تفصیلات حاصل کر رہے ہیں ۔

روزنامہ جنگ کے مطابق جے آئی ٹی سات سینئر افسران پر مشتمل ہو گئی، جن کو مختلف محکموں کے دیگرچودہ افسران کی مدد بھی حاصل ہوگی۔اس کے سربراہ ایڈیشنل ڈی جی ایف آئی اے نجف قلی مرزا ہوں گےجو سابق صوبائی و زیر داخلہ ذوالفقار مرزا کے عزیز ہیں ۔ ایف آئی اے نے دعویٰ کیا ہے کہ کریڈٹ ڈپازٹرز کی تعداد 15سے بڑھ کر دو درجن ہو گئی ہے، انوسٹی گیشن رپورٹ کے مطابق 4,431,545,792 روپے مختلف جعلی اکائونٹس کے ذریعے منتقل کیے گئے،ان میں ایم ایس پراجیکٹ اور زین ملک نے75کروڑ،ایم ایس سجوال ایگری فا رمز پرائیوئٹ لمیٹڈ5کروڑ5لاکھ، ایم ایس ٹنڈو اللہ یار شوگر ملز23کروڑ84لاکھ46ہزار، ایم ایس اومنی پرائیویٹ لمیٹڈ5کروڑ، ایم ایس ایگرو فارمز تھنٹ ایک کروڑستر لاکھ ، ایم ایس الفاذولو کمپنی پرائیوئٹ لمیٹڈدو کروڑ 25لاکھ، ، حاجی مرید اختر( بینکر کنٹریکٹر کی طرف سے )دو کروڑ، ایم ایس شیر محمد مغیری اینڈ کمپنی ( کنٹریکٹر) پانچ کروڑ، ایم این سردار محمد اشرف بلوچ پرائیویٹ لمیٹڈ( کنٹریکٹر) دس کروڑ، ایم ایس اے ون انٹرنیشنل 184,506,490 روپے، ایم ایس لکی انٹرینیشنل 30 کرو ڑ50لاکھ، ایم ایس لاجسٹک ٹریڈنگ ( آئی آئی چندری گر)14کروڑ50لاکھ، ایم ایس اقبال میٹلز 156,380,086روپے، ایم این رائل انٹرنیشنل 18کروڑ50لاکھ، اور این آئی ایس عمیر ایسوسی ایٹس نے 58کروڑ12لاکھ روپے منتقل کیے، تفتیش کارنے راز داری کی شرط پر یہ بھی بتایا کہ مستفید ہونے والے افراد اور کمپنیوں کی تعدادبیس سے زیادہ ہو گئی ہے۔ انوسٹی گیشن رپورٹ کے مطابق رقم حاصل کرنے والے افراد میں چیئرمین سمٹ بینک نصیر عبد اللہ لوتہ49 کروڑ20لاکھ، ایم ایس انصاری شوگر ملز( انور مجید ) علی کامہ73,782,303روپے، ایم ایس اومنی پولی میر پیکیجز پرائیوٹ لیمٹڈ( عبد الغنی مجید )پچاس لاکھ، ایم ایس ایتھا نول ( مصطفیٰ ذول گسنالز مجید اینڈ عبد الغنی مجید )ایک کروڑ 50لاکھ، ایم ایس چیمبر شوگر ملز( انور مجید، نمر مجید ) بیس کروڑ، ایم ایس ایگرو فارمز تھالیہ( انور مجید ، ناذلی مجید)57لاکھ، ایم ایس زرداری گروپ پرائیویٹ لمیٹڈ ( آصف زرداری، فریال تالپور و دیگر )پندرہ کروڑ، ایم ایس پارتھی نین( اقبال خان، نوری) پانچ لاکھ، ایم ایس اے ون انٹرنیشنل575,249روپے، ایم ایس لکی ا نٹرنیشنل 10کروڑ دو لاکھ، ایم ایس لاجسٹک ٹریڈنگ چودہ کروڑ پچاس لاکھ، ایم ایس رائل انٹرنیشنل28کروڑ50 لاکھ،جب کہ عمیر ایسوسی ایٹس نے80کروڑ دس لاکھ روپے وصول کیے۔

تحقیقات سے معلوم ہوا ہے کہ غیر قانونی رقم سے دوبئی میں جائیدادیں خریدی گئیں۔ انور مجید جو اومنی گروپ آف انڈسٹریزکے مالک ہیں ، اس رقم کا سب سے زیادہ فائدہ اٹھانے والے ہیں ، وہ اب پاکستان سے فرار ہو چکے ہیں ، ان کے آجر خواجہ انور مجید اور عبد الغنی مجید کی ہدایت پر بینک حکام کی ملی بھگت سے جعلی اکائونٹ کھولا گیا۔ انور مجید خوسکی شوگر ملز ، ایگرو فارمز ٹھٹھہ ، انصاری شوگر ملز، ٹنڈو اللہ یار شوگر ملز پرائیویٹ لمیٹد اور چیمبر شوگر ملز کے ڈائریکٹر ہیں ۔ 23کروڑ44لاکھ60ہزار کے پندرہ چیک یو بی ایل آواری ٹاور برانچ اکائونٹ نمبر0200129022میں ٹرانسفر ہوئے۔ ایم ایس انصاری شوگر ملز عبد الغنی مجید میں 73,782.303 اور چیمبر شوگر ملز میں بیس کروڑ جب کہ اے ون ا نٹرنیشنل کے اکائونٹ سے نصیر عبد اللہ لوتہ کے اکائونٹ میں 492 ملین کی رقم منتقل ہوئی۔ یہ رقم بھی اومنی گروپ کے ڈائریکٹرز کی ہدایات پر ٹرانسفر کی گئی۔ عبد الغنی کو اومنی پولی میر پیکیجز، خوسکی شوگر ملز، ٹنڈو اللہ یار شوگر ملز اور ایتھانول پرائیویٹ لمیٹڈ کے اکائونٹس سے بھاری رقم ملی جس اربوں میں ہے۔ اومنی گروپ کی مختلف کمپنیوں کے سی ایف او اسلم مسعود نے سمٹ بینک کے حکام کو اے ون انٹرنیشنل کا بینک اکائونٹ کھولنے کے لیے اکائنوٹ اوپننگ فارم دکھایا، وہ ایگرو فارمز ٹھٹھہ کے بھی دستخطی ہیں ۔ اس وقت کی ریلیشن افسر نورین سلطان نے اے ون انٹرنیشنل کا اکائونٹ کھولنے اور ڈائریکٹرز منیجرز ایمپلائز آف اومنی گروپ کے اکائونٹس آپریشنز میں تعاون کا اعتراف کیا ہے۔ ارم اگی ( ابراہیم لنکرز کے نام دو اکائونٹ ) نے عارف حبیب بینک (اب سمٹ بینک ) میں اکائونٹ کھولنے کا اعتراف کیا تا ہم سندھ بینک شاہ بر میں اکائونٹ نمبر 0354-151324-1000کی ملکیت سے انکار کیا، تحقیقاتی رپورٹ میں مزید انکشاف کیا گیا ہے کہ بینک اکائونٹس میں اقبال میٹلز، لاجسٹک ٹریڈنگ اور رائل انٹرنیشنل کے ایڈریس ظاہر کیے گئے ہیں ۔ اے ون انٹرنیشنل ،ابراہیم لنکرز، اور عمیر ایسوسی ایٹس انٹرنیشنل بزنس سنٹر اینڈ شاپنگ سنٹر عبد اللہ ہارون روڈ کراچی کا ایڈریس ہے جوایم ایس پار تھی نن پرائیوٹ لمیٹڈ کی ہے۔ ان اکائونٹس سے دیگر کے علاہ ایم ایس پار تھی نن کے اکائونٹس میں بھی رقم منتقل کی گئی ہے۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد