امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کا آبائی ملک میں لگا مجسمہ جلا دیا گیا

امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کا آبائی ملک میں لگا مجسمہ جلا دیا گیا

  

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کے آبائی ملک میں لگایا گیا ان کا مجسمہ جلادیا گیا۔برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق میلانیا ٹرمپ کے پیدائشی ملک سلووینیا میں لگایا جانیوالا مجسمہ نذر آتش کردیا گیا۔برطانوی میڈیا کے مطابق برلن نژاد فنکار نے امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کا مجسمہ تیار کیا تھا، جسے 4 جولائی کو امریکہ کے یوم آزادی پر جلایا گیا جس کے بعد اسے اس کی جگہ سے ہٹا دیا گیا ہے۔میلانیا ٹرمپ کے اس لکڑی کے مجسمے پر آسمانی رنگ کیا گیا تھا اور اسے اس طرح بنایا گیا تھا کہ جس طرح انہوں نے ٹرمپ کی تقر یب حلف برداری میں لباس پہنا تھا،جبکہ پتلے کو جولائی 2019 میں نصب کیا گیا تھا۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ واقعے کی فوری طور پر تحقیقا ت شروع کردی گئی ہیں۔برطانوی میڈیا کے مطابق میلانیا ٹرمپ کا مجسمہ جلائے جانے پر وائٹ ہاؤس نے کسی بھی قسم کا رد عمل دینے سے گریز کیا۔برطانوی میڈیا کا کہنا ہے کہ میلانیا ٹرمپ کا مجسمہ نصب کرنے پر بعض شہریوں نے اسے میلانیا کی توہین قرار دیا تھا اور مجسمے کو ایک کارٹون کریکٹر سے تشبیہ دی تھی۔مجسمہ بنانے والے فنکار کا کہنا ہے وہ جاننا چاہتے ہیں پتلا کس نے اور کیوں جلایا۔ انہیں امید تھی یہ مجسمہ امریکہ میں جاری سیاسی صورتحال سمیت امیگریشن کے حوالے سے جاری بحث پر مذاکرات کا راستہ کھولے گا۔

مزید :

صفحہ اول -