”مطلب ہم جہاں بھی ہوں کورٹ پیچھا نہیں چھوڑے گی اور ۔۔“ اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ اور اعتزاز احسن کے درمیان دوران سماعت دلچسپ مکالمہ

”مطلب ہم جہاں بھی ہوں کورٹ پیچھا نہیں چھوڑے گی اور ۔۔“ اسلام آباد ہائیکورٹ ...
”مطلب ہم جہاں بھی ہوں کورٹ پیچھا نہیں چھوڑے گی اور ۔۔“ اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ اور اعتزاز احسن کے درمیان دوران سماعت دلچسپ مکالمہ

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ اور اعتزاز احسن کے درمیان پولٹری فیڈکیس میں ویڈیو لنک کے ذریعے سماعت کے دوران دلچسپ جملوں کا تبادلہ ہوا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ہائیکورٹ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ اعتزاز صاحب آپ کو ویڈیو لنک پر ویلکم کرتے ہیں ، اعتزاز احسن نے کہا کہ میں یہاں پر ماسک اپنے ساتھ اور سینٹائزر استعمال کر کے بیٹھا ہوں ، چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ اکیلے ہیں تو وہاں آپ کو ماسک کی ضرورت نہیں ہے ، یہ ملک کی واحد ہائیکورٹ ہے جہاں بیرون ملک سے دلائل کی سہولت موجود ہے ۔

اعتزاز احسن نے جواب دیا کہ مطلب ہم جہاں بھی ہوں کورٹ پیچھا نہیں چھوڑے گی، معافی چاہتاہوں میں روسٹرم پرنہیں جہاں آپ کے سامنے کھڑاہوسکتا،چیف جسٹس نے کہا کہ آپ کوکھڑاہونے کی ضرورت نہیں،آپ دلائل شروع کریں۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -