"یہ ایک غریب طالبہ ہے جس نے موم بتی کی روشنی میں پڑھ کر اچھے نمبر حاصل کیے" سیاستدان نے میا خلیفہ کی تصویر والی پوسٹ شیئر کی تو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا

"یہ ایک غریب طالبہ ہے جس نے موم بتی کی روشنی میں پڑھ کر اچھے نمبر حاصل کیے" ...

  

 بخارسٹ (ڈیلی پاکستان آن لائن) یورپی ملک رومانیہ میں ایک سیاستدان کی جانب سے فحش فلموں کی سابق لبنانی اداکارہ میا خلیفہ کو غریب طالبہ قرار دینا مہنگا پڑ گیا، ان کی اپنی پارٹی نے انہیں نکال باہر کیا۔

رومانیہ کی سوشل ڈیموکریٹک پارٹی سے تعلق رکھنے والے آئیونل آئزک ٹیوڈوراخ نے فحش فلموں کی سابق اداکارہ میا خلیفہ سے متعلق ایک پوسٹ سوشل میڈیا پر شیئر کی۔ انہوں نے اس تصویر کے بارے میں لکھا " یہ الیگزینڈرا ٹموفٹی ہے ، رومانیہ کی ایک طالبہ جس نے موم بتی کی روشنی میں پڑھائی کی اور اچھے نمبر حاصل کیے، لیکن ہم لوگ جعلی ماڈلز کو ہی پرموٹ کرتے ہیں، آپ نے بہت اچھا کام کیا ہے الیگزینڈرا، خدا ہمیشہ آپ کی مدد کرے اور آپ کے ساتھ رہے۔"

رومانین سیاستدان کی جانب سے کم علمی میں کی گئی اس غلطی نے سوشل میڈیا پر ان کا مذاق بنا کر رکھ دیا۔ بعد میں انہیں جب پتا چلا کہ یہ طالبہ الیگزینڈرا نہیں بلکہ فحش فلموں کی سابق اداکارہ میا خلیفہ ہے تو انہوں نے اپنی پوسٹ ڈیلیٹ کردی۔

آئیونل آئزک ٹیوڈوراخ کی اس "غلطی" پر ان کی اپنی سیاسی جماعت سوشل ڈیموکریٹک پارٹی نے انہیں پارٹی سے نکال دیا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -