اینکر سمیع ابراہیم کو بھی نامعلوم  افراد نے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

  اینکر سمیع ابراہیم کو بھی نامعلوم  افراد نے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا

  

اسلام آباد (آن لائن)سینئر صحافی ایاز امیر کے بعد سمیع ابراہیم کو بھی نامعلوم افراد نے حملہ کرکے تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔تفصیلات کے مطابق سینئر اینکر سمیع ابراہیم  دفتر سے باہر نکلے تو کچھ نامعلوم افراد پہلے سے موجود تھے، ان میں ایک خواجہ سرا بھی تھا جس نے کہا کہ تم نے گالیاں دی ہیں اور پھر ان پر حملہ کر دیا۔ سمیع ابراہیم نے کہا کہ جب میں دفتر سے نکلا تو جہاں میری گاڑی پارک تھی میں وہاں گیا تو پہلے سے ہی دو سے تین لوگ موجود تھے جن میں ایک خواجہ سرا بھی تھا۔انہوں نے کہا کہ خواجہ سرا میرے پاس آیا اور کہا کہ کچھ خیرات دے دو، میری جیب میں جو پیسے تھے میں نے اس کو دیے تو اتنی دیر میں اس نے میرا ہاتھ پکڑ لیا اور مجھ پر حملہ کر دیا۔ سمیع ابراہیم نے کہا کہ اس کے بعد دو اور بھی  آگئے اور انہوں نے مجھ پر حملہ کر دیا اور کہا کہ تم نے گالیاں دی ہیں، میں نے پیچھے دیکھا تو ایک اور بندہ بھی تھا، مجھے ڈر تھا کہ یہ کہیں مجھے گاڑی میں نا لے جائیں۔سمیع ابراہیم نے کہا کہ شکر ہے کہ میں اس وقت دفتر کے نیچے ہی تھا تو میں ہاتھ چھڑا کر واپس دفتر میں چلا گیا۔

سمیع ابراہیم

مزید :

صفحہ اول -