ملتان،بکرا چوری کی وارداتوں میں اضافہ،پولیس غائب

 ملتان،بکرا چوری کی وارداتوں میں اضافہ،پولیس غائب

  

ملتان(سپیشل رپورٹر)ملتان شہر بیشتر علاقوں میں بکرا چوری کی وارداتیں عروج پکڑ گئی۔ بیوپاری اور شہری  لٹنے پر مجبور،پولیس کاغذی قانونی کارروائی کی حدتک محدود(بقیہ نمبر2صفحہ6پر)

 ہوکر رہ گئی۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے عید الاضحی کے قریب آتے ہی شہریوں اور بیوپاریوں نے بکرے اور دیگر قربانی کے جانور کی خرید و فروخت کا کام عروج پکڑ چکا ہے۔لیکن اس کے ساتھ نوسرباز اور چوروں نے شہریوں اور بیوپاریوں کو لوٹنا مختلف طریقوں سے  شروع کردیا ہے۔ شہر کے مختلف علاقوں میں قربانی کے بکرا سمیت دیگر جانور کی چوری کی ان گنت  وارداتوں میں اضافہ ہوگیا ہے۔جبکہ ملتان پولیس ایسے میں صرف خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے اطلاع ملنے کے بعد پولیس روایتی انداز اپناتے ہوئے موقع پر پہنچ کر کاغذی خانہ پوری کرکے چلے جاتے ہیں۔بیوپاریوں کے مال کہ بروقت برآمدگی نہ ہونے سے وہ شدید پریشانی سے دوچار رہتے ہیں۔جبکہ پولیس کی کارکردگی کے لئے سوالیہ نشان ہے۔  اب تک شہر کے مختلف علاقوں اور قائم کی جانے والی سرکاری منڈیوں میں سے سینکڑوں بکرے چوری کی وارداتوں واقع ہوئیں ہیں۔ضلعی پولیس اور انتظامیہ کو چاہیے کہ وہ   شہر کی مختلف منڈیوں میں موجود بیوپاری  جان و مال کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے لائحہ عمل بناکر مزید نقصان سے بچائیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -