احسن اقبال کیساتھ بدتمیزی کرنیوالی پی ٹی آئی کی خواتین کے چہرے سامنے آگئے

احسن اقبال کیساتھ بدتمیزی کرنیوالی پی ٹی آئی کی خواتین کے چہرے سامنے آگئے
احسن اقبال کیساتھ بدتمیزی کرنیوالی پی ٹی آئی کی خواتین کے چہرے سامنے آگئے

  

لاہور ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی احسن اقبال  کے ساتھ بدتمیزی اور نعرہ بازی کرنیوالی خواتین کے چہرے بھی سامنے آگئے، تصاویر شیئر کرتے ہوئے احسن اقبال نے لکھا کہ "یہ وہ چہرے ہیں جن کی تربیت عمران نیازی نے ہٹلر کی پلے بک سے کی ہے"۔ 

وفاقی وزیر کا کہنا تھاکہ "یہ وہ چہرے ہیں جن کی تربیت عمران نیازی نے ہٹلر کی پلے بک سے کی ہے۔ عام زندگی میں لوگ انہیں پڑھا لکھا سمجھتے ہونگے لیکن تہذیب محض تعلیم سے نہیں آتی۔ والدین کی تربیت، صحبت اور زندگی میں انسان کسے فالو کرتا ہے یہ عناصر انسان کو خواہ وہ کتنا تعلیم یافتہ ہو اسے گنوار بھی بنا سکتے ہیں"۔

 بعدازاں لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ  چند افراد نے خواتین اور بچوں کو آگے کر کے ہلڑ بازی کی ، میرے ساتھ بھی کوئی جذباتی کارکن ہوتا تو صورتحال گھمبیر ہو جاتی ۔ چند سال قبل پروپیگنڈے سے متاثر ایک نوجوان نے میری جان لینے کی کوشش کی ،انتہا پسندی کے خاتمے کیلئے تدبیریں سوچتا ہوں،جب نفرت کا بیج بویا جائے تو اسے نکلنے میں کئی سال لگتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں معاشی مسائل کا سامنا ہے جنہیں ایک دو سال میں حل کیا جا سکتا ہے، معاشرے میں نفرت کے بیج بو دیئے جائیں تو وہ نکالے نہیں جا سکتے، خواتین موجود ہونے کے باعث قانونی کارروائی کرنے سے گریز کیا ہے، اگر ہم نے ایسے رویوں کی حوصلہ شکنی نہ کی تو خانہ جنگی ہو سکتی ہے۔

احسن اقبال نے کہا کہ عمران خان دوبارہ اقتدار میں نہیں آسکتا ،  عمران خان سڑکوں پر دھکے کھا رہا ہے ، عمران خان نے لوگوں کو ٹشو پیپر کی طرح استعمال کیا ، عمران نیازی کو کرکٹ میں لانے والا اس کا کزن ماجد خان تھا ۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -