جوبائیڈن کی ناقص کارکردگی ، الیکشن سے دستبردار ہونے کیلئے دباؤ بڑھ گیا، حکمراں جماعت مخمصے کا شکار

جوبائیڈن کی ناقص کارکردگی ، الیکشن سے دستبردار ہونے کیلئے دباؤ بڑھ گیا، ...
 جوبائیڈن کی ناقص کارکردگی ، الیکشن سے دستبردار ہونے کیلئے دباؤ بڑھ گیا، حکمراں جماعت مخمصے کا شکار

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 نیویارک (نیوزڈیسک) امریکہ کے صدر  جوبائیڈن کی ناقص کارکردگی ،صدارتی الیکشن سے دستبردار ہونے کیلئے دباؤ بڑھ گیا جبکہ حکمراں جماعت ڈیموکریٹک پارٹی مخمصے کا شکار ہو چکی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر جوبائیڈن پر صدارتی الیکشن سے دستبردار ہونے کے لیے دباؤ بڑھتا جا رہا ہے لیکن وہ ریس سے باہر ہونے کو تیار نہیں جس پر گیند نینسی پیلوسی کے کورٹ میں ہے۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ صدارتی الیکشن کے سلسلے میں ہونے والے مباحثے میں جوبائیڈن کی ناقص کاکردگی پر حکمراں جماعت ڈیموکریٹک پارٹی مخمصے کا شکار ہے۔ڈیموکریٹس کے رہنما اور ووٹرز نے اپنے صدارتی امیدوار جوبائیڈن کی بھولنے کی عادت اور بڑھتی ہوئی عمر کے باعث تذبذب کا شکار تھے اور صدارتی مباحثے میں جوبائیڈن کی غیرمطمئن کارکردگی نے سونے پر سہاگہ کردیا۔ ڈیمو کریٹس کی بڑی تعداد چاہتی ہے کہ اوباما سے لے کر ارکان اسمبلی تک ہر کوئی جو بائیڈن سے جمعے تک صدارتی دوڑ سے دستبردار ہونے کی التجا کریں تاہم جوبائیڈن اب تک انکاری ہیں۔

"جنگ کے مطابق درجنوں ممبران اور سینیٹرز خطوط لکھنے والے ہیں جس میں جو بائیڈن سے صدارتی ریس سے دستبردار ہونے کا مطالبہ کیا جائے گا۔ ایسا شاید اتوار کی سہ پہر ہو جب ہاؤس ڈیموکریٹک لیڈر جیف ریز اعلیٰ کمیٹی کے ارکان کے ساتھ زوم سیشن کا انعقاد کریں گے۔بتایاجاتا ہے کہ گیند اب نینسی پیلوسی کے کورٹ میں ہے جو ایوان نمائندگان کی سابق سپیکر ہیں۔جو بائیڈن کو اگرچہ ہفتے کے روز کچھ پولز میں حوصلہ افزاء خبریں ملی ہیں۔ بلومبرگ اور مارننگ کنسلٹ کے پولز میں جوبائیڈن اب مشی گن اور وسکونسن میں ڈونلڈ ٹرمپ سے آگے ہیں۔تاہم جوبائیڈن اب بھی لازمی جیتنے والی ریاست پنسلوانیا میں پیچھے ہیں جس کے لیے وہ اتوار کو پنسلوانیا میں انتخابی مہم چلائیں گے۔