حالیہ دوروں کے دوران شاہین آفریدی کے برے برتاؤ کی بازگشت، صحافی نے ماضی میں کپتان بابر اعظم کے ساتھ باؤلر کی لڑائی کا معاملہ ایک بار پھر اٹھا دیا 

حالیہ دوروں کے دوران شاہین آفریدی کے برے برتاؤ کی بازگشت، صحافی نے ماضی میں ...
حالیہ دوروں کے دوران شاہین آفریدی کے برے برتاؤ کی بازگشت، صحافی نے ماضی میں کپتان بابر اعظم کے ساتھ باؤلر کی لڑائی کا معاملہ ایک بار پھر اٹھا دیا 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ باؤلر شاہین آفریدی کے برے برتاؤ سے متعلق رپورٹس سامنے آئی ہیں جس کے بعد سوشل میڈیا پر نئی بحث شروع ہو گئی ہے ۔ بتا یا جا رہا ہے کہ قومی ٹیم کے کوچز کی جانب سے چیئر مین پی سی بی محسن نقوی کو دی جانے والی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شاہین آفریدی نے حالیہ ٹورز کے دوران کوچز اور مینجمنٹ سٹاف سے مبینہ طور پر برا برتاؤ کیا لیکن مینیجر اور وہاب ریاض نے شاہین آفریدی کے خلاف کوئی ایکشن نہ لیا، ٹورز کے دوران ٹیم ڈسپلن برقرار رکھنا مینیجرز کی ذمہ داری تھی، اس چیز کا جائزہ لیا جا رہا ہے کہ شاہین آفریدی کے خلاف ایکشن کیوں نہ لیا گیا۔

اس خبر پر تبصرہ کرتے ہوئے صحافی عبد اللہ چیمہ نے کہا کہ اب کوچ گیر ی کرسٹن نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ شاہین نے ٹیم کے ساتھ برا برتاؤ کیا لیکن جب ایشیاء کپ کے دوران یہ بات رپورٹ ہوئی تھی کہ شاہین آفریدی نے کپتان بابر اعظم سے لڑائی کی تب ٹیم مینیجر کو کیوں نہیں ہٹا یا گیا تھا بلکہ اس کے بجائے شاہین آفریدی کو کپتانی دے دی گئی ۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر پہلے ہی ایکشن لیا جاتا تو شاید ہمیں ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں ان نتائج کا سامنا نہ کرنا پڑتا۔

مزید :

کھیل -