مون سون کے لیے واسا کا ایمر جنسی پلان جاری ،ملازمین کی چھٹیاں منسوخ

مون سون کے لیے واسا کا ایمر جنسی پلان جاری ،ملازمین کی چھٹیاں منسوخ

  

                                                                                  لاہور(جنرل رپورٹر) مون سون کے لئے واسا نے ایمرجنسی پلان جاری کر دیا ہے جس کے لئے واسا میں ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ہے اور پلان کے تحت واسا ملازمین کی چھٹیوں پر پابندی عائد کر دی گئی ہے پابندی کا آغاز 15جون سے ہو گا۔ جو15ستمبر تک جاری رہے گا اسی دوران ملازمین اور افسروں کی ہر قسم کی چھٹیاں کرنے پرپابندی عائد کر دی گئی ہے سوائے ایسے ملازمین یا افسر جنہیں ایمرجنسی ہو گی انہیں چھٹی حاصل کرنے کے لئے ایمرجنسی کا ثبوت فراہم کرنا ہو گا جس کا کیس ٹو کیس فیصلہ کیا جائے گا۔ ایمرجنسی پلان منیجنگ ڈائریکٹر واسا نصیر چودھری نے بروقت جاری کر دیا ہے جس کا باقاعدہ طور پر نوٹیفیکیشن جاری کر دیا گیا ہے جس کے تحت مون سون کے دوران واسا کے فیلڈ سٹاف اور افسروں پر چھٹیاں لینے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے نوٹیفیکیشن کا اطلاق 15جون سے ہو گا اور15ستمبر تک جاری رہے گا۔ ملازمین اتوار کی چھٹی بغیر اجازت نہیں کر سکیں گے جس کا انہیں تنخواہ کا چوتھائی حصہ اوور ٹائم ملے گا اس حوالے سے ایم ڈی واسا نصیر چوہدری سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ 15جون سے شہر بھر میں سب ڈویژن اور نشیبی علاقوں میں ایمرجنسی سنٹر قائم کر دیئے جائیں گے۔ جو15ستمبر تک قائم رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ایمرجنسی سنٹروں میں واسا کا عملہ24گھنٹے فرائض سرانجام دے گا۔ ان سنٹروں کو ضروریات کے سامان کے مطابق لیس کیا جائے گا اور جمع پانی کو نکالنے کے لئے جدید پمپس پر سنٹر پر موجود ہونگے مانیٹرنگ کے لئے الگ سے ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں ڈی ایم ڈی ڈائریکٹرز، ایس ڈی اوسب ڈویژن کی سطح پر مانیٹرنگ کریں گے ایم ڈی نے کہا کہ محکمہ موسمیات سے 24گھنٹے رابطے میں رہنے کےلئے ایک الگ سے سیل قائم کیا گیا ہے بارش کی پیشگی اطلاعات پر عملہ نشیبی علاقوں میں الرٹ رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ سوائے ایمرجنسی کے کسی کو چھٹی نہیں ملے گی۔ اتوار کی چھٹی بھی کرنے کی اجازت نہیں ہو گی اور جس کا اضافی معاوضہ دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پانی کی شہر میں قلت نہیں ہونے دینگے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -